پنجاب پولیس کا رمضان المبارک کے دوران سکیورٹی پلان تشکیل

پنجاب پولیس کا رمضان المبارک کے دوران سکیورٹی پلان تشکیل

  

لاہور(کرائم رپورٹر)انسپکٹر جنرل پولیس پنجاب شعیب دستگیر نے کہا ہے کہ رمضان المبارک کے دوران مساجد اور امام بارگاہوں کی سیکیورٹی کیلئے پولیس فورس، قومی رضاکاروں کی تعیناتی کے علاوہ تمام دستیاب وسائل اور جدید ٹیکنالوجی سے بھرپور استفادہ کیا جائے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے سنٹرل پولیس آفس میں رمضان المبارک کی آمد سے قبل سیکیورٹی انتظامات اور انسداد کورونا کے حوالے سے جاری اقدامات کے جائزہ کیلئے منعقدہ اجلاس میں افسران کو ہدایات دیتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں صوبے کے تمام آر پی اوز، سی پی اوز اور ڈی پی اوز نے بذریعہ ویڈیو لنک شرکت کی۔ رمضان المبارک کے دوران تمام دستیاب وسائل کو بروئے کار لاکر سکیورٹی پلان مرتب کر لیا گیا ہے جس کے تحت صوبے بھر میں دوران رمضان تقریبا70ہزار سے زائد پولیس افسران، اہلکار اور سیکیورٹی اور کورونا ڈیوٹی سر انجام دیں گے۔

جبکہ فورس کے ساتھ ساتھ میٹل ڈٹیکٹرز، واک تھرو گیٹس اور سی سی ٹی وی کیمروں سے بھی بھرپور مدد لی جائے گی اور حساس دینی عبادت گاہوں کی سیکیورٹی کیلئے ڈرون کیمروں کا استعمال بھی کیاجائے گا جس پر آئی جی پنجاب نے احکامات دیتے ہوئے کہاکہ آر پی اوزاور ڈی پی اوز خود فیلڈ میں نکل کر رمضان سیکیورٹی انتظامات کی انسپکشن کرتے رہیں اور سیکیورٹی پر مامور افسران و اہلکاروں کو ڈیوٹی کی حساسیت کے بارے میں موثر بریفنگ بھی دی جائے تاکہ و ہ اپنے فرائض منصبی احسن انداز میں ادا کرسکیں۔ انہوں نے مزیدکہاکہ رمضان المبارک میں کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو کم سے کم رکھنے کیلئے علمائے اکرام سے سماجی فاصلوں کی پابندی اور احتیاطی تدابیر کے متعلق عوامی آگاہی کو مزید بہتر کرنے کیلئے مدد اور تعاون بھی لیا جائے۔انہوں نے تاکید کی کہ تمام ڈی پی اوزاپنے اپنے اضلاع میں مساجد، امام بارگاہوں، رمضان بازاروں سمیت اہم عمارتوں و مارکیٹس کی سیکیورٹی صورتحال کوروزانہ کی بنیاد پر خود مانیٹر کریں جبکہ بین الصوبائی اور بی…

مزید :

علاقائی -