سعودی عرب میں 2خواتین سے بد اخلاقی کرنیوالے 3ملزمان کے سر قلم

    سعودی عرب میں 2خواتین سے بد اخلاقی کرنیوالے 3ملزمان کے سر قلم

  

جدہ(آن لائن)سعودی مملکت میں دو خواتین کو بداخلاقی کا نشانہ بنانے والے تین افراد اپنے عبرت ناک انجام کو پہنچ گئے، جن کا گزشتہ روز جدہ میں سر قلم کر دیا گیا۔ ملزمان گھروں میں لوٹ مار کرنے کے علاوہ خواتین کی آبرو ریزی کرنے جیسے گھنانے جرائم میں بھی ملوث تھے۔رپورٹ کے مطابق پاکستانی شہری محمد عمر ولد محمد لئیق اور اس کے دو سعودی ساتھیوں ھتان بن سراج بن سلطان الحربی اور سلطان بن سراج بن سلطان الحربی کو عدالت کی جانب سے ڈکیتی کی وارداتیں کرنے اور ایک گھر میں گھس کر دو خواتین کو بد اخلاقی کا نشانہ بنانے کے جرم میں موت کی سزا سنائی گئی تھی، گزشتہ روز اس سزا پر عمل کرتے ہوئے ان تینوں کا سر قلم کر دیا گیا۔وزارت داخلہ نے بتایا کہ پاکستانی شہری محمد عمر اور اس کے دونوں سعودی ساتھی ھتان اور سلطان سیکیورٹی اہلکاروں کے بھیس میں ایک گھر میں داخل ہوئے، اس دوران انہوں نے شراب بھی پی رکھی تھی۔ بداخلاقی کی شکار مظلوم خواتین نے فوری طور پر پولیس کو اس لرزہ خیز واردات کے بارے میں آگاہ کر دیا۔ ملزمان کی گرفتاری کے لیے ایک خصوصی ٹیم تشکیل دی گئی جس نے انہیں چند روز کے اندر ہی گرفتار کر لیا تھا۔ملزمان کو فوجداری عدالت میں پیش کیا گیا۔ملزمان نے اپنے گھنانے جرائم کو تسلیم کرنے سے انکار کر دیا تھا، تاہم استغاثہ کی جانب سے ان کیخلاف ٹھوس شواہد اور گواہیاں پیش کی گئیں۔ جس کے بعد عدالت نے تینوں ملزمان کے جرائم کے تحت ان کے سر قلم کرنے کی سزا سنائی تھی۔ گزشتہ روز تینوں مجرموں کو ان کے بھیانک جرم پر سر قلم کر کے انجام تک پہنچا یا گیا۔دونوں سعودی مجرم ھتان اور سلطان سگے بھائی تھے۔

ملزمان ک

مزید :

صفحہ آخر -