کرونا کی مقامی منتقلی خطرناک، روک تھام نہ کی تو وائرس بے قابو ہوجائیگا: وزیراعلٰی سندھ

کرونا کی مقامی منتقلی خطرناک، روک تھام نہ کی تو وائرس بے قابو ہوجائیگا: ...

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر)وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہاہے کہ سندھ کے شہروں میں کورونا وائرس کی مقامی طورپر منتقلی میں تیزی آگئی ہے،مقامی ٹرانسمیشن خطرناک ہے، فوری روک تھام نہ کی گئی تو یہ وائرس بے قابو ہوجائے گا۔سندھ حکومت کی کوروناوائرس سے متعلق رپورٹ سامنے آگئی ہے، جس میں انکشاف کیا گیا کہ مقامی افراد میں کورونا وائرس کے پھیلاؤ میں خطرناک حد تک اضافہ ہوگیا ہے۔رپورٹ میں بتایا گیا کہ سندھ میں پہلے دن سے اب تک کوروناسے61افرادجاں بحق ہوئے اور تقریباروزانہ 2افرادکوروناکی وجہ سے ہلاک ہورہے ہیں، شہروں میں کوروناکی مقامی ٹرانسمیشن نے تیزی آگئی ہے۔وزیراعلی سندھ مرادعلی شاہ کو کوروناسے متعلق موصول رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے کہ کراچی سے کشمور اور تھرپار کر تک کورونا پھیل گیا ہے۔وزیراعلی نے تمام ڈی سیزکوہاٹ اسپاٹ علاقوں کی رپورٹ مرتب کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہاہے کہ جہاں ہاٹ اسپاٹ ہووہاں لاک ڈاؤن مزید سخت کیاجائے اور ضرورت پڑے تو ہاٹ اسپاٹ والی گلیوں کو سیل بھی کیا جاسکتا ہے۔مراد علی شاہ نے سندھ کے ہر علاقے کے مکینوں کا کوروناٹیسٹ کرانے کی ہدایت کرتے ہوئے کہاکہ مقامی ٹرانسمیشن خطرناک ہورہی ہے، فوری روکاجائے، فوری روک تھام نہ کی گئی تو یہ وائرس بے قابو ہوجائے گا۔وزیراعلی سندھ نے کہا کہ ہمارے پاس ٹیسٹنگ کٹس کی کوئی کمی نہیں، اب وقت آچکا ہے اسے استعمال کیا جائے، مساجد میں نماز باجماعت ہوگی،لیکن ایس اوپیز کو مدنظر رکھا جائے گا۔.

مزید :

صفحہ اول -