کورونا وائرس کے معاشی و سیاسی اثرات سامنے آنے لگے،امریکا کے بعد ایک اور ملک میں لاک ڈاون کے خلاف مظاہرہ

کورونا وائرس کے معاشی و سیاسی اثرات سامنے آنے لگے،امریکا کے بعد ایک اور ملک ...
کورونا وائرس کے معاشی و سیاسی اثرات سامنے آنے لگے،امریکا کے بعد ایک اور ملک میں لاک ڈاون کے خلاف مظاہرہ

  

واشنگٹن/بیروت(ڈیلی پاکستان آن لائن)کورونا وائرس کے معاشی و سیاسی اثرات سامنے آنے لگے،امریکا کے بعد ایک اور ملک میں لاک ڈاون کے خلاف مظاہرے کیے گئے ہیں۔

غیر ملکی خبررساں ادارے کے مطابق لبنانی دارالحکومت اور دیگر شہروں میں لوگوں کی بڑی تعداد نے لاک ڈاون اور اس سے پیدا ہونے والی صورتحال کیخلاف احتجاج کیا۔

مظاہرین لاک ڈاون سے معمولات زندگی منجمد ہونے، مہنگائی میں اضافہ ہونے اور بے روزگاری بڑھنے پر برہم ہیں۔

کورونا وائرس کے معاشی و سیاسی اثرات سامنے آنے لگے،امریکا کے بعد ایک اور ملک میں لاک ڈاون کے خلاف مظاہرہ

 غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق کورونا وائرس کی وجہ سے لاک ڈاؤن کے خلاف شہریوں نے گاڑیوں کے قافلے کی صورت میں احتجاج کیا۔

لبنان کے دیگر شہروں میں بھی شہری حکومت کے خلاف سڑکوں پر نکلے اور لاک ڈاؤن کی وجہ سے بڑھتی ہوئی بے روزگاری اور مہنگائی کے خلاف احتجاج کیا۔

واضح رہے کہ لبنان میں کورونا وائرس سے 21 افراد جاں بحق ہو چکے ہیں جبکہ اور 670 سے زائد متاثر ہیں۔

دنیا بھر میں کورونا وائرس کے باعث لگائے گئے لاک ڈاؤن کی وجہ سے بے روزگاری میں اضافہ ہو گیا ہے جس کی وجہ سے لوگوں کو شدید پریشانی اور مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

دنیا کی مضبوط ترین معیشت رکھنے والے ملک امریکہ میں بھی بے روزگاری اپنی انتہا کو پہنچ چکی ہے اور عوام لاک ڈاؤن کے باوجود حکومت کے خلاف مظاہرے کرنے پر مجبور ہوگئے ہیں۔

امریکہ میں کورونا نے شعبہ سیاحت سے وابستہ لوگوں سے بھی روز گار چھین لیا ہے اور اب تک اسی لاکھ امریکی بےروزگار ہو چکے ہیں۔

امریکہ میں مظاہرین کا مطالبہ تھا کہ حکومت گھر پر رہنے کی پالیسی اور لاک ڈاؤن ختم کرے۔ امریکہ کی مختلف ریاستوں میں ہونے والے مظاہروں میں حکومتی پالیسیوں کے خلاف نعری بازی بھی کی گئی۔

امریکی ریاست نیویارک کورونا وائرس کے سبب شدید متاثر ہوئی ہے جہاں اٹھارہ ہزار سے زائد اموات اور دو لاکھ سینتالیس ہزار سے زائد افراد بیمار ہیں۔ امریکہ میں مجموعی طور پر چالیس ہزار سے زائد اموات ہو چکی ہیں اور سات لاکھ تریسٹھ ہزار سے زائد مریض ہیں۔

امریکہ میں لاک ڈاون کے باعث بڑھتی ہوئی بے روزگاری سے شہریوں کی بے چینی میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے۔ واشنگٹن، مونٹانا، ایریزونا اور کولاراڈو میں شہریوں نے لاک ڈاؤن کے خلاف مظاہرے کیے تھے جن میں اسلحہ کی حامی تنظیموں نے بھرپور شرکت کی تھی۔

مزید :

کورونا وائرس -