خاتون کے ساتھ 23 روز تک مسلسل جنسی زیادتی، اُسے اپنا ہی فضلہ کھانے پر مجبور کردیا، انتہائی شرمناک تفصیلات سامنے آگئیں

خاتون کے ساتھ 23 روز تک مسلسل جنسی زیادتی، اُسے اپنا ہی فضلہ کھانے پر مجبور ...
خاتون کے ساتھ 23 روز تک مسلسل جنسی زیادتی، اُسے اپنا ہی فضلہ کھانے پر مجبور کردیا، انتہائی شرمناک تفصیلات سامنے آگئیں

  

کنبرا(مانیٹرنگ ڈیسک) آسٹریلیا میں ایک درندہ صفت انسان لڑکی کو اغواءکرکے 23دن تک اسے جنسی زیادتی کا نشانہ بناتا رہا اور اس پر ظلم و بربریت کے ایسے پہاڑ توڑے کہ سن کر ہی انسان کانپ اٹھے۔ دی مرر کے مطابق اس 34سالہ شیطان صفت کا نام نکولس جان کریلے تھا۔ جو لڑکی کو، جس کا نام قانونی وجوہات کی بناءپر ظاہر نہیں کیا جا سکتا، کو محبوس رکھ کر نہ صرف بدترین جنسی تشدد کا نشانہ بناتا رہا بلکہ اسے آگ پر بیٹھنے پر مجبور کرتا رہا، اس کے پوشیدہ اعضاءپر کھولتا ہواپانی ڈالتا رہا اور اسے اپنا ہی فضلہ کھانے پر مجبور کرتا رہا۔

رپورٹ کے مطابق ملزم نے لڑکی پر وحشیانہ جسمانی تشدد بھی کیا جس سے اس کے جسم کی کئی ہڈیاں ٹوٹ گئی۔ جب پولیس نے لڑکی کو بازیاب کروایا تو اس کا 46فیصد جسم بری طرح جلا ہوا تھا، اس کی جلد اکھڑ کر لٹکی ہوئی تھی اور چہرہ جگہ جگہ سے پھٹا ہوا تھا جیسے چھری وغیرہ سے کٹ لگائے گئے ہوں۔پراسیکیوٹر سینڈرا کیوپینا نے عدالت میں بتایا کہ متاثرہ لڑکی کے چہرے اور جسم کے زخم اس قدر خراب ہو چکے تھے کہ ان میں کیڑے پڑ چکے تھے۔ اگر اسے چند دن اور بازیاب نہ کرایا جاتا اور ہسپتال نہ پہنچتی تو وہ اب تک مر چکی ہوتی۔ عدالت میں مقدمے کی کارروائی جاری ہے اور ملزم کو ممکنہ طور پر عمر قید کی سزا ہو سکتی ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -