اسپین، دہشت گردی سے متاثرہ افراد کے لیے خصوصی دعائیہ تقریب

اسپین، دہشت گردی سے متاثرہ افراد کے لیے خصوصی دعائیہ تقریب

بارسلونا(این این آئی)بارسلونا میں ایک دعائیہ یادگاری تقریب کا انعقاد کیا گیا، جس میں دو دہشت گردانہ حملوں کے متاثرین کے ساتھ اظہار یک جہتی کیا گیا۔ ادھر تحقیقاتی اداروں نے اپنی تفتیش کا رخ مراکش کے ایک امام کی طرف سے موڑ دیا ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق ہسپانوی شہر بارسلونا کے تاریخی چرچ سگرادا فیملیا میں لوگوں کی ایک بڑی تعداد نے ایک خصوصی یادگاری تقریب میں شرکت کی، جس میں اسپین اور کامبرلز میں ہوئے حملوں میں ہلاک و زخمی ہونے والوں کی یاد تازہ کی گئی اور متاثرین کے ساتھ اظہار یک جہتی کیا گیا۔ جمعرات 17 اگست کو بارسلونا حملے میں چودہ افراد ہلاک اور درجنوں زخمی ہو گئے تھے جبکہ جمعے کی علی الصبح کامبرلز کے حملے میں ساتھ افراد زخمی ہوئے تھے۔اس یاد گاری تقریب میں ہسپانوی بادشاہ فلیپے اور وزیر اعظم ماریانو راخوئے کے علاوہ کئی اعلیٰ سیاسی و سماجی شخصیات نے شرکت کی۔

اس موقع پر سکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے تھے۔چرچ کے باہر اونچی عمارتوں میں ماہر نشانہ باز تعینات تھے جبکہ چرچ کے اردگرد سکیورٹی فورسز کی بھاری نفری بھی موجود تھی۔

مزید : عالمی منظر