بونیر ،ضلع ناظم کی طرف سے محکمہ تعلیم میں ترقی وتبادلوں کے احکامات منسوخ

بونیر ،ضلع ناظم کی طرف سے محکمہ تعلیم میں ترقی وتبادلوں کے احکامات منسوخ

بونیر(ڈسٹرکٹ رپورٹر)ضلع ناظم بونیر ڈاکٹر عبیداللہ نے اپنے اختیارات کا استعمال کرتے ہوئے ڈسٹرکٹ ایجوکیشن افیسر کی جانب سے محکمہ تعلیم میں ترقی اور تبادلوں کے احکامات منسوخ کر دئے ۔اورڈپٹی کمشنر بونیر کو تحریری طو رپر اگاہ کردیا ۔نئے نظام کے تحت ضلع ناظم کی مشاورت کے بغیر ڈی ای اتبادلے اور پروموشن نہیں کرسکتے ۔ایپکا بونیر کے صدر وزیر ذادہ نے ضلع ناظم کے اس اقدام کو درست قرار دیتے ہوئے کہا کہ ضلع ناظم کے ساتھ مشاور ت ضروری ہے ۔تفصیلات کے مطابق ڈسٹرکٹ ایجوکیشن افیسر بونیر نے گذشتہ روز محکمہ تعلیم بونیر میں اساتذہ کی پروموشن اور تبادلوں کے احکامات جاری کئے تھے ۔جس پر ضلع ناظم بونیر نے انکے ساتھ مشاور ت نہ کرنے اور ان کو بائی پاس کرنے پر کئے گئے پروموشن اور تبادلوں کو منسوخ کرتے ہوئے ڈی سی بونیر کو تحریری طو رپر اگاہ کردیا ۔ضلع ناظم کے ترجمان کے مطابق نئے نظام کے تحت انکے ماتحت محکمے کسی قسم کے تبادلے ،تقرریوں اور تبادلے کرنے سے پہلے ضلع ناظم کے ساتھ مشاورت ضروری ہے ۔اور انکے ساتھ مشاورت کے بغیر کوئی بھی اقدام غیر قانونی تصور کیا جائے گا ۔ادھر آل کو اڑدینشین کونسل کے چئیرمین اور ایپکا بونیر کے صدر وزیر ذادہ نے ڈسٹرکٹ ناظم کی کاروائی کو قانونی قرار دیتے ہوئے کہا کہ ضلع ناظم عوامی نمائندہ اور ضلع کا سربراہ ہوتاہے اور انکے ماتحت محکمے انکے ساتھ مشاورت کرنے کے پابند ہو ں گے ۔یادرہے کہ ضلع کونسل بونیر اور محکمہ تعلیم کے درمیان گذشتہ کئی عرصہ سے چند کلرکس کے تبادلوں پر ایک دوسرے کے ساتھ محاذ ارائی پرہے ۔کونسل کے قرار دادوں پر عمل درامد نہ کرنے اور کلرکس کوتبدیل کرنے پر وہ ایک دوسرے کے ساتھ مدمقابل ہے ۔ادھر ضلع کونسل کے اپوزیشن لیڈر حاجی صدیق اللہ اس معاملے پر اپنے رائے کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ڈی ای او بونیر جماعت اسلامی کے وزیر اور ڈسٹرکٹ ناظم کے درمیان گھیرا ہو اہے وہ کس کا حکم مانے ۔انہوں نے کہا کہ پی ٹی ائی کا روز اول سے موقف ہے کہ اداروں میں سیاسی مداخلت نہیں ہو نی چاہئے ۔اداروں کو مضبوط کرکے انہیں بااختیار بنایا جائے ۔ڈسٹرکٹ ناظم اور ای ڈی او کے درمیان چپقلش عوام کے لئے اور اساتذہ کے لئے نیک شگون نہیں ہے ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر