حکومت پارلیمنٹ کو سنجیدہ نہیں رہی، 53 وزراءمیں چند موجود ہیں،دیر سے آنے والے وزراءکو کرسی پر کھڑا کر کے سزا دی جائے، خورشید شاہ

حکومت پارلیمنٹ کو سنجیدہ نہیں رہی، 53 وزراءمیں چند موجود ہیں،دیر سے آنے والے ...
حکومت پارلیمنٹ کو سنجیدہ نہیں رہی، 53 وزراءمیں چند موجود ہیں،دیر سے آنے والے وزراءکو کرسی پر کھڑا کر کے سزا دی جائے، خورشید شاہ

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ نے کہا کہ حکومت پارلیمنٹ کو سنجیدہ نہیں رہی ،53 وزراءمیں سے چند ایوان میں موجود ہیں،کیا تاثر دینا چاہتے ہیں کہ کالے بادل چھائے ہوئے ہیں، قومی اسمبلی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے خورشید شاہ نے کہا کہ براہ راست عوام دیکھ رہے ہیں کہ کرسیاں خالی پڑی ہیں،ایوان میں 5 وزراءکے علاوہ کوئی نہیں آتا، ان کا کہنا تھا کہ انتخابی اصلاحات بل پر بحث ہو رہی ہے اورآج قائد ایوان سمیت کوئی موجود نہیں،کیا ہم فارغ ہیں جو یہا ں آ جاتے ہیں اگرہم ضد میں آکر باہر چلے جائیں گے تو بل پاس نہیں ہو سکے گا،خورشید شاہ نے سپیکر قومی اسمبلی سے کہا کہ آپ بھی دیر سے آنے والے وزراءکو کرسی پر کھڑا کر کے سزا دیں،اپوزیشن لیڈر نے کہا کہ قومی اسمبلی اجلاس کے کورم کو دیکھ کر شرمندگی ہوتی ہے ،جب پارلیمنٹ کو مضبوط نہیں کریں گے تو باہر جا کر واویلا کرنے کا کوئی فائدہ نہیں۔

مزید : اسلام آباد