سیالکوٹ کےنوجوان نے کوئٹہ کی عالمہ کو بھگا کر شادی کے بعد قتل کر دیا

سیالکوٹ کےنوجوان نے کوئٹہ کی عالمہ کو بھگا کر شادی کے بعد قتل کر دیا
سیالکوٹ کےنوجوان نے کوئٹہ کی عالمہ کو بھگا کر شادی کے بعد قتل کر دیا

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

کوئٹہ (ویب ڈیسک )رانگ نمبر پردوستی کاانتہائی بھیانک انجام ہوگیا،کوئٹہ کی 18سالہ عالمہ کو سیالکوٹ کے نوجوان نے قتل کر کے لاش ویرانے میں پھینک دی، پولیس نے ملزم کو گرفتار کر لیا۔

روزنامہ جنگ کے مطابق کوئٹہ کے علاقے گوالمنڈی تھانے کی حدود کی رہائشی نوجوان عالمہ مسماة (ج) کو رواں سال جنوری میں رانگ نمبر سےایک کال موصول ہوئی جو سیالکوٹ سے تعلق رکھنے والے نوجوان محمد بلال کی تھی بعد ازاں یہ کال دونوں کے درمیان دوستی میں تبدیل ہو گئی اور کافی عرصے تک ٹیلیفونک گفتگو ہوتی رہی ، محمد بلال نےلڑکی کو شادی کی پیش کش کی جس پر اس نے نوجوان کو کوئٹہ آنے کا کہا ،نوجوان رواں سال مارچ میں کوئٹہ آیا اوراسے بھگا کر لے گیا اور سیالکوٹ میں شادی رچا لی۔

لڑکی کے والد نے گوالمنڈی تھانے میں اپنی بیٹی کی گمشدگی کی رپورٹ بھی درج کرائی، پولیس نے بھی لڑکی کی تلاش شروع کی لیکن دوسری طرف بعد ازاں مذکورہ نوجوان نے اپنے والدین اور بھائیوں سے جائیداد اور رقم کا مطالبہ شروع کر دیا اور رقم نہ دینے کی صورت میں دھمکیاں دینا شروع کر دیں جس پر نوجوان کی والدہ نے سیالکوٹ کے پولیس تھانے میں رپورٹ درج کرادی ۔پولیس نے محمد بلال کو گرفتار کر کے تفتیش کی تو اس نے کوئٹہ سے لڑکی کو بھگاکر نہ صرف پسند کی شادی کا اعتراف کیا بلکہ بیوی کو قتل کرنیکا بھی انکشاف کیا ۔

قیامت کی نشانی! نوجوان مغربی لڑکی ایک ایسے جانور کے ساتھ شرمناک فعل کرتی رنگے ہاتھوں پکڑی گئی کہ سوچ کر ہی شیطان بھی شرماجائے

سیالکوٹ پولیس نے گوالمنڈی پولیس سے رابطہ کیا، کوئٹہ سے ایک ٹیم نے سیالکوٹ پہنچ کر ملزم سے تفتیش کی تو ملزم نے بتایا کہ اس نے عالمہ کو قتل کرنے کے بعد لاش ویرانے میں پھینک دی تھی ، ملزم کی نشاندہی پر پولیس نے لڑکی کی لاش برآمد کر لی جسے گزشتہ روز کوئٹہ پہنچا کر تدفین کر دی گئی جبکہ بلوچستان پولیس کی خصوصی ٹیم نے سیالکوٹ جا کر مذکورہ کیس میں نوجوان کو گرفتار کر کے کوئٹہ پہنچا دیا ہے ۔مزید تفتیش جاری ہے۔

مزید : کوئٹہ