گوگل نے اینڈرائڈ کا نیا ورژن ”اوریو“ متعارف کرا دیا

گوگل نے اینڈرائڈ کا نیا ورژن ”اوریو“ متعارف کرا دیا
گوگل نے اینڈرائڈ کا نیا ورژن ”اوریو“ متعارف کرا دیا

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

نیویارک (ڈیلی پاکستان آن لائن) گوگل نے سمارٹ فون کے آپریٹنگ سسٹم اینڈرائڈ کا نیا ورژن جاری کر دیا ہے جس کا نام معروف بسکٹ کے نام ”اوریو“ پر رکھا گیا ہے جسے پوری دنیا میں کھایا اور بے حد پسند کیا جاتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔ ”ہانیہ کہاں بیٹھے گی۔۔۔؟“ اس سوال پر فہد مصطفی نے ایسا شرمناک جواب دیدیا کہ ہر کوئی دنگ رہ گیا، کیا کہا؟ جان کر آپ بھی غصے سے لال پیلے ہو جائیں گے

گزشتہ روز گوگل نے اینڈرائڈ کے نئے ورژن 8.0 کے نام کا باقاعدہ اعلان کیا جس کے ساتھ ہی اس کے نام کے حوالے سے چلنے والی تمام افواہیں بھی درست ثابت ہو گئیں۔

اینڈرائڈ 8 کو آکٹوپس کا نام ملا اور نہ ہی اوٹ میل بسکٹ کا بلکہ گوگل نے بسکٹ بنانے والی معروف کمپنی ”نیبسکو“ کی شراکت داری کیساتھ اسے ”اوریو“ کا نام دیا ہے۔ اب جبکہ نئے ورژن کے نام کا باقاعدہ اعلان ہو گیا ہے تو سب کے ذہن میں یہ سوال گردش کر رہا ہے کہ کیا ان کا سمارٹ فون پر اس نئے ورژن کی اپ ڈیٹ میسر ہو گی؟

گوگل کے مطابق نئے ورژن پر مبنی اپ ڈیٹ جاری کر دی گئی ہے یہ اینڈرائڈ اوپن سورس پراجیکٹ کیلئے دستیاب ہو چکا ہے لیکن یہ آپ کے فون پر کب آئے گا؟ یہ ایک ایسا سوال ہے کا جس کا مکمل جواب گوگل بھی فراہم نہیں کر سکتا کیونکہ یہ مختلف کمپنیوں پر منحصر ہے کہ وہ اپنے کون سے سمارٹ فون کیلئے اس ورژن پر مبنی اپ ڈیٹ تیار کرتی ہے۔

گوگل کے مطابق وہ جلد ہی اینڈرائڈ اوریو کو ”پکسل، پکسل ایکس ایل، نیکسس 5X، نیکسس 6P، نیکسس پلیئر اور پکسل C کیلئے فراہم کر دیں گے اور یہ اپ ڈیٹ براہ راست گوگل کی جانب سے فراہم کی جائے گی کیونکہ مذکورہ تمام اینڈرائڈ سمارٹ فونز گوگل کے ہی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔ حسن نواز، حسین نواز اور مریم نواز شریف میں شدید جھگڑا، بات گالم گلوچ تک پہنچ گئی: چوہدری غلام حسین کا دعویٰ

اس کے علاوہ سام سنگ، ایل جی، موٹورولا، نوکیا، ہوآوی اور دیگر کمپنیوں کے منحصر ہے کہ وہ کن سمارٹ فونز کو اس نئی اپ ڈیٹ کیلئے منتخب کرتی ہیں اور کب تک اپ ڈیٹ فراہم کریں گی۔ اس کا اعلان وقتاً فوقتاً تمام کمپنیوں کی جانب سے کیا جائے گا جس کے بعد ہی واضح ہو سکے گا کہ مارکیٹ میں پہلے سے موجود کون سے سمارٹ فونز پر یہ نیا ورژن دستیاب ہو گا۔

مزید : سائنس اور ٹیکنالوجی