ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر نااہل کرسکتے ہیں ،حلقہ این اے 120کے امیدواروں سے میٹنگ کے دوران الیکشن کمیشن حکام کا انتباہ

ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر نااہل کرسکتے ہیں ،حلقہ این اے 120کے امیدواروں سے ...
ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر نااہل کرسکتے ہیں ،حلقہ این اے 120کے امیدواروں سے میٹنگ کے دوران الیکشن کمیشن حکام کا انتباہ

  

لاہور(نامہ نگار )صوبائی الیکشن کمشنر، پنجاب شریف اللہ کی سربراہی میں حلقہ این اے 120 ضمنی الیکشن کے تمام امیدواران کے ساتھ ضابطہ اخلاق کے حوالے سے اہم میٹنگ منعقد کی گئی جس میں متعلقہ حلقہ کے ڈسٹرکٹ ریٹرننگ آفیسر، ریٹرننگ آفیسر ، اسسٹنٹ ریٹرننگ آفیسر، مانیٹرنگ آفیسرز، ریجنل الیکشن کمشنر اور ڈسٹرکٹ الیکشن کمشنر لاہورنے بھی شرکت کی ۔

اطلاعات تک رسائی کے حق کا بل سینیٹ سے متفقہ طور پر منظور,وفاقی اداروں پر اطلاق فوری ہو گا

صوبائی الیکشن کمشنر نے شرکاءسے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ الیکشن کمیشن مذکورہ حلقہ میں منصفانہ انتخاب کا انعقاد کرنے کے لئے کوشاں ہے جس کے لئے تمام امیدواران کا تعاون درکار ہے ۔ انہوں نے کہا کے تمام امیدواران ضابطہ اخلاق پر عمل درآمد کو یقینی بناتے ہوئے اپنا قومی اور اخلاقی فریضہ ادا کریں ۔پاکستان تحریک انصاف سے یاسمین راشد ،پیپلز پارٹی کے فیصل میراور دیگر امیدواران نے اس حوالے سے اپنی گزارشات صوبائی الیکشن کمشنر کے سامنے پیش کیں جن میں سر فہرست حلقہ میں ترقیاتی کام رکوانے کی درخواست کی گئی ،علاوہ ازیں حلقہ مےں کسی بھی رکن اسمبلی و دیگر آفس ہولڈرکو حلقہ میں جلسہ و جلوس کروانے سے روکا جائے اور انتخابی اخراجات کی بھی کڑی نگرانی کی جائے ۔ حلقہ میں آویزاں مقررہ سائز سے تجاوز کردہ پوسٹرز، بینرزاور فلیکسزکو اتروایا جائے ۔اس امر میں تمام امیدواروں کا کہنا تھا کہ ضابطہ اخلاق کی بار بار خلاف ورزی کرنے والے امیدوار کو عوامی نمائندگی ایکٹ کے سیکشن 103(اے )کے تحت سزا دی جائے اور نا اہل قرار دیا جائے ۔ پولنگ اسٹیشن کے اندر اور باہر فوج کی تعیناتی کی درخواست کی گئی اور پولنگ سکیم کی بروقت فراہمی کو یقینی بنانے کی گزارش کی گئی ۔صوبائی الیکشن کمشنر، پنجاب نے کہا کہ امیدواران کی تمام شکایات اور گزارشات پر الیکشن کمیشن قوانین کے مطابق کارروائی کر رہا ہے ۔ حلقہ این اے 120 کے انتخاب کو مانیٹر کرنے کیلئے مانیٹرنگ ٹیمزتشکیل دی گئی ہیں جو کہ روزانہ اپنی رپورٹ الیکشن کمیشن کے سامنے پیش کرتی ہیں ، کسی بھی امیدوار کو سزادینے یا نا اہل کرنے کا پورا اختیار الیکشن کمیشن کے پاس ہے او ر ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کی صورت میں اس پر عمل بھی کیا جائے گا ۔ ریٹرننگ آفیسر حلقہ این اے 120 نے اس حوالے سے کہا ہے کہ ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کرنے والوں کو بروقت نوٹس جاری کردیئے گئے ہیں ،اس کے علاوہ ڈی سی او، میٹروپولٹین کارپوریشن لاہور کے میئر ، اور ڈائریکٹر جنرل پاکستان ہارٹیکلچر اتھارٹی سے بھی رابطہ کیا گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ حلقہ این اے 120کی ڈرافٹ پولنگ سکیم 17 اگست کو تمام امیدواران کو مہیا کر دی گئی تھی جس پر اعتراضات کی تاریخ 22 اگست 2017 ءہے ۔ قانون کے مطابق حتمی پولنگ سکیم الیکشن سے 15روز قبل شائع کر دی جائے گی۔ 

مزید : لاہور