سینیٹر میر حاصل بزنجو کا انتقال

سینیٹر میر حاصل بزنجو کا انتقال

  

معروف ترقی پسند سیاست دان میر غوث بخش بزنجو(مرحوم) کے صاحبزادے نیشنل پارٹی کے سربراہ سینیٹر میر حاصل بزنجو انتقال کر گئے، وہ کراچی کے سر آغا خان ہسپتال میں زیر علاج تھے اور پھیپھڑوں کے کینسر میں مبتلا تھے۔ میر حاصل بزنجو دو مرتبہ قومی اسمبلی کے رکن اور دو  ہی بار سینیٹر منتخب ہوئے۔ وہ ایک جمہوریت اور ترقی پسند رہنما کی حیثیت سے جانے جاتے تھے، تاہم سیاسی عمل میں اعتدال پسندی کا مظاہرہ کرتے۔ان کے والد اور وہ نسلی تعصب سے بالاتر ہو کر ملک کے اتحاد و استحکام کے لئے کوشاں رہے۔ میر حاصل بزنجو ایک اچھے مقرر تھے،ان کی سیاسی اور ملکی خدمات سے انکار نہیں کیا جا سکتا، وہ ایک ایسے رہنما تھے جو وفاقی وزیر بھی رہے، تاہم ان پر کبھی بدعنوانی کا کوئی الزام نہیں لگا۔ ان کی وفات سے ملک کی دوسری نسل کے اعتدال پسند اور روا دار رہنما کا خلاء مزید بڑھ گیاہے، آج کے ملکی حالات میں ان کی ذات خاص اہمیت کی حامل تھی۔ ان کو گزشتہ روز آبائی قبرستان میں سپردِخاک کیا گیا، اللہ اُن کی مغفرت فرمائے۔

مزید :

رائے -اداریہ -