کوڑے میں لگی آگ میں گرکر بچہ جھلس گیا، بی ایچ یو عملے کا علاج سے انکار، متاثرین کا احتجاج

  کوڑے میں لگی آگ میں گرکر بچہ جھلس گیا، بی ایچ یو عملے کا علاج سے انکار، ...

  

چوک سرورشہید(نمائندہ پاکستان)کوڑا کرکٹ میں لگی آگ میں گر کر بچہ جھلس گیا۔ بچے کو فوری طور پر بی ایچ یو ہسپتال (بقیہ نمبر44صفحہ6پر)

چک نمبر632/TDA لے جایا گیا۔ ڈیوٹی پر موجود ڈسپنسر عبدالرشید نے دن 11 بجے وقت ختم ہونے کا کہہ کر ٹر خا دیا۔ورثاء کی منتیں سماجتیں بھی کام نہ آئیں، بچے کے ورثاء کو ہسپتال سے دھکے دیکر نکال دیا۔بچے کی حالت تشویشناک، ورثاء کا شدید احتجاج، وزیر اعلیٰ پنجاب نوٹس لینے کا مطالبہ، تفصیل کے مطابق چک نمبر539/TDA کے محمد انصر کا دس سالہ محمد عثمان کوڑا کرکٹ میں لگی آگ کے ڈھیر میں گر کر بری طرح جھلس گیا جسے شدیدتشویشنا ک حالت میں نزدیکی BHUہسپتال چک نمبر632/TDA لایا گیا۔ دن 11 بجے کے قریب جب وہ ہسپتال پہنچے تو ہسپتال میں کوئی بھی ڈاکٹر موجود نہ تھا۔ ڈسپنسر عبدالرشید موجود تھا جو کہ موبائل پر فیس بک چلانے اور خوش گپیوں میں مصروف تھا۔ مبینہ طور پر پہلے تو اس نے کافی دیر کوئی توجہ نہ دی جب آگ سے جلے بچے کے والد محمد انصر نے ڈسپنسر عبدالرشید کو ریکوسٹ کی کہ ہمارے بچے کی حالت خراب ہے اسے دیکھ لو تو وہ آگ بگولہ ہوگیا۔اور کہا کہ دفع ہوجاؤ، آپ کو پتہ نہیں کہ ہسپتال کا وقت ختم ہوگیا ہے۔ جس پر محمد اسلم نے منت سماجت کی کہ بچے کو ابتدائی طبی امداد دے دو ہم اسے کسی دوسرے ہسپتال لے جائیں گے لیکن ڈسپنسر عبدالرشید کو کوئی ترس نہ آیا اس نے انہیں دھکے دیکر ہسپتال سے نکال دیا۔جس کے بعد آگ سے جلے بچے کی حالت مذید تشویشنا ک ہوگئی۔ اور غریب لوگ پرائیویٹ ہسپتال میں بچے کا علاج کرنے پر مجبور ہوگئے۔ بچے کے والد انصر اور چچا محمد اسلم نے وزیر اعلیٰ پنجاب اور سیکریٹری ہیلتھ پنجاب سے مطالبہ کیا کہ واقعہ کی انکوائری کرائی جائے اور فرائض سے غفلت برتنے والے بی ایچ یو چک نمبر632/TDAکے ڈاکٹرز اور ڈسپنسرز کے خلاف سخت کارروائی کی جائے اور اگر ہمارے بچے کا جانی نقصان ہوا تو ہم عبدالرشید ڈسپنسر کے خلاف قتل کا مقدمہ درج کرائیں گے۔

احتجاج

مزید :

ملتان صفحہ آخر -