حاصل بزنجو کی وفات سے ملک ایک عظیم  سیاسی رہنما سے محروم ہوگیا، ڈاکٹر نخبہ لنگاہ

  حاصل بزنجو کی وفات سے ملک ایک عظیم  سیاسی رہنما سے محروم ہوگیا، ڈاکٹر نخبہ ...

  

ملتان (سٹی رپورٹر) پاکستان سرائیکی پارٹی کی چیئرپرسن ڈاکٹر نخبہ تاج لنگاہ، مرکزی صدر ملک اللہ نواز وینس، سیکرٹری(بقیہ نمبر40صفحہ6پر)

 جنرل اکبر انصاری ایڈووکیٹ، ڈپٹی چیئرمین علامہ اقبال وسیم، سیکرٹری اطلاعات ملک جاوید چنڑ ایڈووکیٹ، سینئر نائب صدر ممتاز خاں ڈاہر، ڈاکٹر مقصود خاں لنگاہ، حاجی اللہ وسایا خاں لنگاہ اور غلام فرید خاں سرجانی نے قوم پرست رہنماء  میر حاصل بازنجو کی وفات پر گہیرے رنج عالم کا اظہار کیا اور کہا ہے کہ ملک ایک عظیم قوم پرست سیاسی جدوجہد کرنے والے عظیم سیاسی کارکن سے محروم ہو گیا ان رہنماؤں نے کہا کہ میر حاصل بازنجو ایک اعلیٰ پائے کے رہنما تھے جنہوں نے سب سے پہلے سرائیکی قوم کے حقوق اور صوبہ سرائیکستان کی حقیقت کو تسلیم کیا 1998 میں ملک کے سب سے بڑے قوم پرستوں کے اتحاد/ پونجم کے پلیٹ فارم سے سرائیکی قوم کے چارٹر آف ڈیمانڈ کو نہ صرف تسلیم کیا بلکہ بیرسٹر تاج محمد خاں لنگاہ جیسے عظیم سرائیکی قوم پرست رہنماء  سے مل کر پاکستان میں بننے والی محقوم مظلوم اور تخت لاہور سے بغاوت کرنے والی قوم کے ساتھ جدوجہد میں مصروف عمل رہے میر حاصل خاں بازنجو نے ملتان میں کئی مرتبہ پاکستان سرائیکی پارٹی کے پلیٹ فارم پر سرائیکی قوم کے حق اور صوبہ سرائیکستان کے لیے آواز بلند کی پاکستان میں جمہوری جدوجہد کے حوالے سے سرائیکی قوم کے لیے بھی وہی حقوق مانگے جو پاکستان میں دیگر اقوام کو حاصل ہیں میر حاصل بازنجو ساری زندگی پسے ہوئے طبقات کے حقوق کے لئے وقف کررکھی تھی پاکستان سرائیکی پارٹی بلوچستان کے غم میں برابر کی شریک ہے اور عنقریب محرم الحرام کے بعد ملتان میں اس عظیم رہنماء  کی یاد میں تعزیتی ریفرنس بھی منعقد کرے گی۔

نخبہ لنگاہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -