متحدہ عرب امارات اور اسرائیل کے معاہدے پر مہاتیر محمد بھی چپ نہ رہ سکے، دل کی بات کہہ دی

متحدہ عرب امارات اور اسرائیل کے معاہدے پر مہاتیر محمد بھی چپ نہ رہ سکے، دل کی ...
متحدہ عرب امارات اور اسرائیل کے معاہدے پر مہاتیر محمد بھی چپ نہ رہ سکے، دل کی بات کہہ دی

  

 کوالالمپور (این این آئی)ملائیشیا کے سابق وزیراعظم مہاتیر محمد نے کہا ہے کہ متحدہ عرب امارات نے اسرائیل کو تسلیم کرکے تاریخ کی خطرناک حماقت کا ارتکاب کیا ہے۔ امارات کی طرف سے اسرائیل کو تسلیم کرنے کے نتیجے میں مسلم دنیا ایک دوسرے کے ساتھ دست وگریباں ہوجائے گی۔

روزنامہ پاکستان کے مطابق مرکز اطلاعات فلسطین کے مطابق اپنے ایک انٹرویو میں مہاتیر محمد نے کہا کہ اسرائیل کے ساتھ امارات کی دوستی کے نتیجے میں مسلم امہ میں پھوٹ پڑے گی۔ اس طرح صہیونی دشمن کو مسلمانوں کو ایک دوسرے کے قتل عام کی آگ پر تیل چھڑکنے کاموقع ملے گا۔ امارات نے ایک ایسا قدم اٹھایا جس کے نتیجے میں مسلم دنیا ایک دوسرے کے ساتھ الجھ جائیگی اور مسلمان ممالک کااپنا امن تہہ وبالا ہوجائے گا۔ اس اقدام سے فلسطین پر اسرائیل کو اپنا قبضہ مضبوط کرنے کا موقع ملے گا۔ فلسطینیوں اور فلسطینی قوم کے ہمدردوں کی طرف سے امارات کے اسرائیل کے ساتھ معاہدے پر رد عمل سے ظاہرہوتا ہے کہ مشرق وسطی میں جاری محاذ آرائی طول پکڑے گی۔

مزید :

بین الاقوامی -