اسسٹنٹ پروفیسر کا ساتھیوں سمیت سپیشل انسپکٹر پر حملہ

اسسٹنٹ پروفیسر کا ساتھیوں سمیت سپیشل انسپکٹر پر حملہ

  

بہاولپور، رحیم یار خان (ڈسٹرکٹ رپورٹر،بیورو رپورٹ)گورنمنٹ کالج کے اسسٹنٹ پروفیسرنے4 نامعلوم ساتھیوں کی مدد سے چیکنگ کے لیے بہاولپور بورڈ (بقیہ نمبر13صفحہ10پر)

سے آئے سپیشل انسپکٹر پر حملہ کردیا دھکے مار کر سینٹر سے باہر نکالنے کی کوشش  کی تفصیل کے مطابق بہاولپور کے رہائشی محمد شمشیر نے پولیس کو اپنی دی جانے والی تحریری شکایت میں بیان کیا کہ وہ بہاولپور بورڈ کی طرف بطور اسپیشل انسپکٹر خانپور ڈگری کالج چیکنگ کے لیے آیا تو کالج کے اسسٹنٹ پروفیسر ذولوجی انور شاہین نے سپرنٹنڈنٹ امتحان سے ذولوجی کا پیپر اپنے بیٹے کے لیے مانگا جس پرسپرنٹنڈنٹ نے کہا کہ بہاولپور سے سپیشل انسپکٹر آئے ہوئے ہیں آپ ان سے بات کر لیں جس پر اسسٹنٹ پروفیسر انور شاہین نے مجھ سے پیپر مانگا جس پر میں نے دینے سے انکار کر دیا جس پر اسسٹنٹ پروفیسر انور شاہین واپس چلا گیا اور ذیشان ممتاز ڈاھر منیر ودیگر نامعلوم ساتھیوں کے ساتھ آ گیا اور مجھے دھکے مار کر سینٹر سے نکال دیا اور جان سے مار دینے کی دھمکیاں بھی دی پولیس نے سپیشل انسپکٹر بہاولپور بورڈ کی مدعیت میں اسسٹنٹ پروفیسر ذولوجی انور شاہین کے خلاف مقدمہ درج کر کے کاروائی شروع کر دی۔ اس واقعہ پر بورڈ ایمپلائز ویلفیئر ایسوسی ایشن بہاولپورکے صدر محمداکرم شاہ جی نے ہنگامی اجلاس بلایا اوراس میں اس واقعے کی شدیدمذمت کی اورکہاکہ بورڈ کے زیراہتمام ہونیوالے امتحانات کیلئے پرامن اورشفاف ماحول کاقیام انتہائی ضروری ہے مگرچندشرپسندعناصرناجائز مفادات کیلئے شفاف ماحول کو خراب کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ ہم اس واقعہ کی بھرپورمذمت کرنے کے ساتھ ساتھ ملزمان کی فور ی گرفتاری کامطالبہ بھی کرتے ہیں۔

شمشیر

مزید :

ملتان صفحہ آخر -