بنوں،سورانی اقوام کے مشران کاٹی بی ایس سے گیس بندش کیخلاف پہرہ دینے کا اعلان

بنوں،سورانی اقوام کے مشران کاٹی بی ایس سے گیس بندش کیخلاف پہرہ دینے کا اعلان

  

 بنوں (ڈسٹرکٹ رپورٹر)اقوام سورانی کے مختلف یونین کونسلوں کے مشران نے غیر قانونی طور پر ٹی بی ایس سے گیس سپلائی بندش کے خلاف مین سپلائی لائن پر پہراہ دینے کاا علان کردیارات کو گیس بندش سے عوام اور گھروں میں خواتین کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے ضلعی انتظامیہ گیس بندش کا نوٹس لے بصورت دیگر حالات خرابی کے ذمہ دار گیس بنوں کے حکا م ہونگے ان خیالات کا اظہار اقوام سورانی کے مشران سابق تحصیل ناظمین سینان درانی ایڈوکیٹ،ملک رضاء خان اور دیگر نے عوام کے ساتھ بنوں کے علاقہ حشنی کلہ میں واقع مین گیس سپلائی لائن کا معائنہ کیا اور غیر قانونی طور پر رات کی تاریکی میں گیس بند کرنے والے اہلکار کو پکڑ لیا جس پر انہوں نے مشران کو بتایا کہ میں گیس آفسران کے حکم پر گیس مین لائن بند کرتا جوکہ میری ڈیوٹی ہے جس پر مشران نے متعلقہ آفسران کے ساتھ رابطہ کیا اور گیس لائن بند نہ کرنے کی اپیل کی اس موقع پر میڈیا سے گفتگو میں ڈسٹرکٹ بار ایسوسی ایشن کے قائمقام صدر اور اقوام سورانی جرگہ کے رہنما سینان درانی ایڈوکیٹ نے بتایا کہ عرصہ سے علاقہ سورانی کے چھ یونین کونسلوں کو سازش کے تحت رات کی تاریکی میں پرائیوٹ شخص کے ذریعے گیس سپلائی معطل کی جاتی ہے جس کے باعث ہزاروں گھروں میں چولہے ٹھنڈے پڑجاتے ہیں اب محکمہ گیس حکام نے ضلع بھر میں شیڈول کے بغیر گیس لوڈشیڈنگ کا سلسلہ شروع کردیا ہے جس سے تاجروں اور عوا م کو شدید مشکلات درپیش ہے انہوں نے کہا کہ مقامی گیس آفسران نے غیر قانونی طور پر گیس بندش کیلئے پرائیوٹ لوگوں کو رکھا ہے جس سے قوموں اور دفتر عملے کے مابین تصادم کا حدشہ پیدا ہوگیا ہے لہذا فوری طور پر غیر قانونی گیس سپلائی لائن بندش کا خاتمہ کیا جائے بصورت دیگر قوم کے افراد ٹی بی ایس پر ازخود پہرا دینگے اور کسی کو بھی غیر قانونی طور پر گیس سپلائی بند نہیں ہونے دینگے 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -