تین افراد نے ساتھی فیکٹری ملازم کے جسم میں پائپ سے زہریلی گیس بھر دی 

تین افراد نے ساتھی فیکٹری ملازم کے جسم میں پائپ سے زہریلی گیس بھر دی 
تین افراد نے ساتھی فیکٹری ملازم کے جسم میں پائپ سے زہریلی گیس بھر دی 

  

لاہور ( ڈیلی پاکستان آن لائن ) لاہور کے علاقے باغبانپورہ میں تین افراد نے ساتھی فیکٹری ملازم کے جسم کے نازک اعضاء میں پائپ کے ذریعے زہریلی گیس بھر دی جس سے متاثرہ نوجوان کی آنتیں پھٹ گئیں ۔

ایف آئی آر کے مطابق لڑکے کے والد نے پولیس کو بتایا کہ اس کے 22سالہ بیٹے محمد نعمان کو فیکٹری میں کام کرنے والے ساتھی تین ورکروں نےزبردستی پکڑا اور پخانے کی جگہ ( مقعد) میں بوائلر کا پائپ ڈال کر ہوا کھول دی جس سے میرے بیٹے کی انتڑیاں وغیرہ پھٹ گئیں ۔

متاثرہ لڑکے کو میو ہسپتال منتقل کر دیا گیا ۔ پولیس کے مطابق دو ملزمان حیدر اور امتیاز کو حراست میں لے لیا گیا ہے جبکہ تیسرا ملزم امجد مفرور ہے جس کی گرفتاری کیلئے چھاپے مارے جا رہے ہیں ۔ 

مزید :

قومی -جرم و انصاف -علاقائی -پنجاب -لاہور -