حکم امتناعی کے باعث ڈار کیس کی سماعت 2 جنوری تک ملتوی

حکم امتناعی کے باعث ڈار کیس کی سماعت 2 جنوری تک ملتوی

اسلام آباد (آئی این پی) اسلام آباد ہائی کورٹ کے حکم امتناع کے باعث احتساب عدالت میں اسحاق ڈار کے خلاف نیب ریفرنس کی سماعت دوجنوری تک ملتوی کردی گئی ہے۔تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت اسلام آباد کے جج محمد بشیر نے اسحاق ڈار کے خلاف آمدن سے زائد اثاثے بنانے کے ریفرنس کی سماعت کی اس موقع پر نیب پراسیکیوٹرعمران شفیق نے عدالت کو بتایا کہ اسلام آباد ہائیکورٹ نے اسحاق ڈار کی درخواست پر ریفرنس کی کارروائی روکتے ہوئے حکم امتناع جاری کیا ہے۔جس پر جج محمد بشیر نے استفسار کیا کہ کیا آپ کو آرڈر کی کاپی ملی ہے؟ اس پر نیب پراسیکیوٹر عمران شفیق نے عدالت کوبتایا کہ آرڈر کی کاپی کے لیے درخواست کی ہے مگر ملا نہیں ہے۔نیب پراسیکیوٹر نے معزز جج سے استدعا کی کہ اگر چھٹیوں کے بعد کی کوئی تاریخ دے دیں تو آرڈر حوالے کردیں گے، جس پر جج محمد بشیر نے استفسار کیا کہ اسلام آباد ہائی کورٹ میں آئندہ تاریخ سماعت کیا ہے؟۔ جس پر نیب پراسیکیوٹر کا کہنا تھا کہ اسلام آباد ہائی کورٹ نے 17 جنوری تک کے لیے حکم امتناع دیا ہے، فاضل جج نے استفسار کیا کہ اسحاق ڈار کی طرف سے کوئی آیا ہے؟اس پر نیب پراسیکوٹر نے کہا کہ اسحاق ڈار کی طرف سے کوئی نہیں آیا، وہ تو چاہتے ہی یہی ہیں، اب اسحاق ڈار کی نیک نیتی بھی معلوم ہوجائے گی کہ وہ اتنے عرصے میں واپس آتے ہیں یا نہیں۔جس کے بعد عدالت نے کیس کی مزید سماعت دو جنوری تک ملتوی کردی۔

حکم امتناعی

مزید : صفحہ اول