شعبہ اردو قومی ضرورت کے تحت انتہائی اہمیت کا حامل ہے،ماہرین

شعبہ اردو قومی ضرورت کے تحت انتہائی اہمیت کا حامل ہے،ماہرین

مظفرآباد (بیورورپورٹ)جامعہ کشمیر ادارہ فروغ معیار کا اجلاس،شعبہ اردو کی کارکردگی پر اعتماد کا اظہار ،شعبہ کی مزید بہتری کیلئے ماہرین نے تجاویز دے دی ،شعبہ کیلئے مستقل پی ایچ ڈی فیکلٹی سمیت دیگر وسائل فراہم کروانے کی سفارش کر دی گئی،گزشتہ روز منعقدہ اجلاس میں ڈین کلیہ فنون پروفیسر ڈاکٹر عائشہ سہیل،ناظم شعبہ معاشیات پروفیسر ڈاکٹر سید نثار حسین ہمدانی ، ناظم ادارہ فروغ معیار پروفیسر ڈاکٹر خواجا رفیق احمد ،سربراہ شعبہ انگریزی ڈاکٹر عبدالقادر ،ڈپٹی ڈائریکٹر ناظم ادارہ فروغ معیار میر عدنان الرحمن ،اسسٹنٹ ڈائریکٹر عمرا ن عباسی ،نقاش یونس کے علاوہ قائم مقام سربراہ شعبہ اردو میر یوسف میر ،لیکچرر اردو عاصمہ کبیر سمیت دیگر نے شرکت کی ،جب کہ ڈاکٹر سیدہ آمنہ بہار بہ طور بیرونی ماہر شریک ہوئیں،اس موقع پرقائمقام رابطہ کار میر یوسف میر نے شعبہ کی کارکردگی کے حوالے سے شرکاء کو تفصیلی بریفنگ دی ،ماہرین نے اپنی تجاویز میں کہا کہ شعبہ اردو قومی ضرورت کے تحت انتہائی اہمیت کا حامل ہے ،شعبہ کو مالیات اور انتظامیہ کے تعاون کی اشد ضرورت ہے ،اس وقت شعبہ کو دو پی ایچ ڈی کل وقتی تدریسی سٹاف کے علاوہ دفتری عملہ کی بھی اشد ضرورت ہے ،شعبہ میں لائبریری کی بھی اشد ضرورت ہے ،اس موقع ناظم ادارہ فروغ معیار پروفیسر ڈاکٹر خواجا رفیق احمد نے یقین دہانی کروائی کہ شعبہ کی قومی اہمیت کے پیش نظر مستقبل میں اس کی کارکردگی مزید بہتر بنانے کے لیے رئیس جامعہ کا مکمل تعاون حاصل کیا جائے گا ،ڈین کلیہ فنون پروفیسر ڈاکٹر آمنہ بہار نے کہا کہ وائس چانسلر کے ویژن کے مطابق اور ان کی ہدایات کی روشنی میں شعبہ کی بہتری کے لیے جلد از جلد عملی اقدامات اٹھائے جائیں گے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر