کراچی،لڑکیوں سے چھیڑ چھاڑ ، لڑکوں پر تشدد، آئی جی سندھ کا نوٹس

کراچی،لڑکیوں سے چھیڑ چھاڑ ، لڑکوں پر تشدد، آئی جی سندھ کا نوٹس

کراچی(کرائم رپورٹر )کراچی کے علاقے فیروزآباد میں پولیس اہلکاروں کے تین لڑکوں پر مبینہ تشدد کے بعد بچوں کے اہل خانہ اور علاقہ مکین سراپا احتجاج بنگئے اور تھانے پر چڑھائی کر دی۔مظاہرین نے ڈی ایس پی کیخلاف شدید نعرے بازی کرتے ہوئے ملوث اہلکاروں کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا۔تفصیلات کے مطابق فیروزآباد تھانے میں رات گئے تین لڑکوں پر ڈی ایس پی یعقوب جٹ کی جانب سے مبینہ تشدد کے بعد اہل خانہ اور علاقہ مکینوں نے تھانے میں گھس کر شدید احتجاج کیا اور ڈی ایس پی کے خلاف نعرے بازی کی۔ اہل خانہ نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے اعلی حکام سے مطالبہ کیا کہ ڈی ایس پی یعقوب جٹ کے خلاف لڑکوں پر کیے گئے تشدد کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے اور ہمیں انصاف دیا جائے۔ مظاہرین نے کہاکہ اگر پولیس افسران ہی عوام کے ساتھ ایسا سلوک کریں گے تو انصاف کیلئے کہاں جائیں گے۔ اس موقع پر ڈی ایس پی فیروزآباد یعقوب جٹ نے میڈیا سے بات چیت میں کہاکہ مجھے شکایت ملی تھی کہ لڑکے پولیس لائن میں آ کر لڑکیوں سے چھیڑ چھاڑ کرتے ہیں۔ شکایت پر ان لڑکوں کو تھانے لے آیا اور تشدد کیا۔ ایک سوال کے جواب پر ڈی ایس پی یعقوب جٹ نے کہا کہ باہر کے لوگ پولیس لائن آکر پولیس اہل کاروں کی لڑکیوں کو چھیڑیں تو ان پر تشدد جائز ہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر