سندھ ہائیکورٹ کرپٹ افسروں کی عہدوں پر موجودگی پر برہم، سیکرٹری خزانہ کو ہٹانے کا حکم

سندھ ہائیکورٹ کرپٹ افسروں کی عہدوں پر موجودگی پر برہم، سیکرٹری خزانہ کو ...
سندھ ہائیکورٹ کرپٹ افسروں کی عہدوں پر موجودگی پر برہم، سیکرٹری خزانہ کو ہٹانے کا حکم

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن)سندھ ہائیکورٹ نے فنڈز خوردبرد کرنے والے افسروں کی تعیناتی پر اظہار برہمی کرتے ہوئے سیکرٹری خزانہ کو ہٹانے کا حکم دے دیااور رپورٹ طلب کر لی، تفصیلات کے مطابق سندھ ہائیکورٹ میں نیب کورضا کارانہ رقم واپس کرنے کے کیس کی سماعت ہوئی، دوران سماعت چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ نے فنڈزخورد بردکرنے والے افسران کی تعیناتی پراظہاربرہمی کرتے ہوئے سیکرٹری خزانہ سید حسن نقوی کوہٹانے کاحکم دے دیا اور رپورٹ طلب کر لی۔

دوران سماعت عدالت نے استفسار کیا کہ چیف سیکریٹری !آپ ایسے لوگوں کو چھپاکرکیوں تحفظ دیتے ہیں؟اس پر چیف سیکرٹری نے جواب دیا کہ میں کسی کو تحفظ فراہم نہیں کررہا ،چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ نے استفسار کیا کہ ان افسران کی تعیناتی میں آپ کا کیا مفاد ہے؟،شکارپوراورسکھرمیں ایسے افسران کی تعیناتی سے آپ خوش ہیں؟،عدالت کے سوال پر چیف سیکرٹری اورایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل مسکراکرخاموش ہو گئے،عدالت نے رضاکارانہ رقم واپس کرنے والے سرکاری ملازمین کی فہرست دوبارہ تیارکرنے کاحکم دیتے ہوئے کہا کہ پہلی فہرست میں کچھ افسران کی شناخت واضح نہیں،چیف سیکرٹری سندھ نے بتایا کہ رقم واپس کرنے والے کچھ افسران عہدوں پربراجمان ہیں۔

لائیو ٹی وی پروگرامز، اپنی پسند کے ٹی وی چینل کی نشریات ابھی لائیو دیکھنے کے لیے یہاں کلک کریں

مزید : علاقائی /سندھ /کراچی