طالبعلم نے سکول میں اپنی دوست کے ساتھ ایسا شرمناک کام کردیا کہ دیکھ کراستانی کی چیخیں نکل گئیں اور پھر۔۔۔

طالبعلم نے سکول میں اپنی دوست کے ساتھ ایسا شرمناک کام کردیا کہ دیکھ کراستانی ...
طالبعلم نے سکول میں اپنی دوست کے ساتھ ایسا شرمناک کام کردیا کہ دیکھ کراستانی کی چیخیں نکل گئیں اور پھر۔۔۔

  

نئی دہلی(این این آئی)بھارت میں بارہویں جماعت کے طالب علم کو اپنی کلاس فیلو دوست کو گلے ملنے پر سکول سے نکال دیاگیا۔

غیرملکی میڈیاکے مطابق بھارتی ریاست کیرالاکے ایک سکول کے ’’امت ‘‘ نامی متاثرہ طالب علم نے بتایاکہ سکول کا کام تھا، میری دوست کام کر رہی تھی، کام ختم ہونے کے بعد میں نے پوچھا کہ تم نے کیسے کیا؟ پھر میں نے اسے گلے لگایا اور تعریف کی کیا کسی کو گلے لگانا اور یہ کہنا کہ آپ نے اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کیا، جرم ہے؟امت جو 12 ویں کے طالب علم ہیں یہ سمجھ نہیں پا رہے کہ انھوں نے ایسا کیا غلط کیا جس کی وجہ سے انھیں سکول سے نکال دیا گیا۔امت نے کہاکہ میرے دماغ میں کچھ بھی غلط نہیں تھا۔ میں نے اسے اساتذہ کے کمرے کے باہر گلے لگایا۔امت نے کہاکہ میں اسے مبارکباد دے رہا تھا تبھی وہاں سے ایک استانی گزریں اور ہمیں دیکھتے ہی وہ کچھ اس طرح چیخنے لگیں جیسے ہم کچھ غلط کر رہے ہوں۔ انھوں نے ہم سے کچھ پوچھا ہی نہیں اور براہ راست وائس پرنسپل کے پاس لے گئیں۔ ہم نے انھیں قائل کرنے کی کوشش کی کہ ہم ایسا ویسا کچھ نہیں کر رہے تھے بلکہ ہم معمول کے مطابق مل رہے تھے۔

دوسری جانب امت کی دوست ’’ ساریتا ‘‘نے بتایا کہ ان پر امت کے خلاف ایک بیان دینے پر زور دیا گیا تھا، انھیں بتایا گیا تھا کہ انھیں یہ کہنا چاہیے کہ امت نے انھیں اس کی مرضی کے خلاف گلے لگایا۔امت کے مطابق اب صورت حال یہ ہے کہ سکول والوں نے ہماری تصاویر پبلک کر دی ہیں، اس کی وجہ سے دوسرے سکولوں میں داخلہ نہیں مل رہا۔ سب کہہ رہے ہیں کہ میں نے اسے5 منٹ تک باہوں میں جکڑے رکھا، کیا یہ ممکن ہے؟ کوئی مجھے پڑھنے یا امتحان دینے سے نہیں روک سکتا اب میں ہائی کورٹ تک جاؤں گا۔

لائیو ٹی وی دیکھنے کے لئے اس لنک پر کلک کریں

مزید : بین الاقوامی