سول جج،اے سی تنازع پر ہڑتال کرنیوالے افسروں کی تفصیلات طلب

سول جج،اے سی تنازع پر ہڑتال کرنیوالے افسروں کی تفصیلات طلب

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ مسٹر جسٹس محمد قاسم خان نے سرگودھا کی تحصیل ساہیوال کے سول جج اور اسسٹنٹ کمشنر کے تنازعہ پر ہڑتال کرنے کے خلاف دائر درخواست پرمتعلقہ افسروں کی گزشتہ ایک ہفتہ کی تمام سرگرمیوں کی تفصیلات مانگ لیں اور ہدایت کی کہ دفاتر میں لگے کیمروں کی ریکارڈنگ سمیت تمام دیگر مواد پیش کیا جائے، عدالت نے قراردیاکہ فردوس عاشق اعوان نے پریس کانفرنس کی تھی ان سے بھی پوچھیں گے کہ کون کون سے افسر ہڑتال پر ہیں اور فردوس عاشق اعوان کی پریس کانفرنس کا ٹرانسکرپٹ بھی لیں گے، عدالت نے پیمرا کو تمام چینلز پراحتجاج کی کال کی ویڈیو اور نشر ہونے والی خبریں پیش کرنے کی بھی ہدایت کی ہے، درخواست پر مزید کارروائی 29 دسمبر کو ہو گی،فاضل جج نے ہڑتال پرناراضی کا اظہار کرتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ ایم پی اے ان افسروں کو مارتے ہیں توکوئی ایکشن نہیں لیتے اور ایک عدالتی حکم پر ایسا واویلا کسی صورت برداشت نہیں ہوگا،چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ جسٹس قاسم خان نے اسسٹنٹ کمشنر کیخلاف عدالتی احکامات پر محکمہ مال اور پٹواریوں کی 

ہڑتال کیخلاف درخواست پر سماعت کی، چیف جسٹس نے برہمی کا اظہار کیا کہ سول جج کی بدمعاشی نا منظور کے نعرے لگائے گئے، ایسی نعرے بازی برداشت نہیں کی جاسکتی۔

اسسٹنٹ کمشنر تنازعہ

مزید :

صفحہ آخر -