الاٹمنٹ کیس: مدعی کی کھلی کچہری میں اسسٹنٹ کمشنر کو گالیاں‘ دھمکیاں 

   الاٹمنٹ کیس: مدعی کی کھلی کچہری میں اسسٹنٹ کمشنر کو گالیاں‘ دھمکیاں 

  

 کوٹ ادو(تحصیل رپورٹر) عرصہ دراز سے الاٹمنٹ کا کیس زیرالتوا ہونے پر فیصل آباد سے آنے والا مدعی کھلی کچہری میں اسسٹنٹ کمشنر سے الجھ پڑا،گالی گلوچ کے بعد سرکاری کاغذات پھاڑ دیے، کچہری میں موجود محکمہ ما ل کے عملہ سمیت لوگوں نے معاملہ رفع دفع کرادیا، اسسٹنٹ کمشنر کی رپورٹ پر مقدمہ درج کر لیا گیا،فیصل آباد کے رہائشی آصف علی،محمد اشفاق (بقیہ نمبر49صفحہ 5پر)

جن کا عرصہ د راز سے تحصیل کوٹ ادو میں الاٹمنٹ کاکیس زیر سماعت ہے، اور آئے روز پیشی سے تنگ مدعی گزشتہ روز پیشی پر آتے ہی بپھر گیا، گزشتہ روز اسسٹنٹ کمشنر کوٹ ادو کی تحصیل آفس میں لگائی جانے والی کھلی کچہری میں آصف علی اور اشفاق احمد نے اسسٹنٹ کمشنر ڈاکٹر فیاض علی جتالہ کوجان سے مار دینے کی دھمکیاں دیتے ہوئے اسے کہا کہ وہ فیصل آباد سے آتے ہیں اور ان کا الاٹمنٹ کیس کا فیصلہ تاحال آپ نے نہیں کیا اور بلند آواز میں اسے گالیاں دیں اور اُس کے سامنے میز پر رکھے سرکاری کاغذات بھی اٹھا کر پھاڑ دیے، کھلی کچہری میں آئے محکمہ مال کے عملہ آور لوگوں نے معاملہ رفع دفع کرادیا، اسسٹنٹ کمشنر کوٹ ادو ڈاکٹر فیاض جتالہ کی رپورٹ پر پولیس سٹی تھانہ کوٹ ادو نے آصف علی اور محمد اشفاق کے خلاف مقدمہ نمبر 773/20زیر دفعہ 506/186/353کے تحت درج کرکے ملزمان کی تلاش شروع کردی ہے۔

دھمکیاں 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -