انتخابی عذر داری کیس: سید عبدالقادر گیلانی کا درخواست پر فیصلہ محفوظ 

انتخابی عذر داری کیس: سید عبدالقادر گیلانی کا درخواست پر فیصلہ محفوظ 

  

ملتان(خصوصی رپورٹر) سابق وزیر اعظم سید یوسف رضا گیلانی کے صاحبزادے سید عبدالقادر گیلانی کی جانب سے این اے 154 سے کامیاب حکومتی رکن قومی اسمبلی احمد حسین ڈیہڑ کے خلاف انتخابی عذرداری کیس کی سماعت ہائیکورٹ ملتان بنچ کے جج جسٹس عاصم حفیظ نے کی۔ فاضل جج نے پٹشنر کے وکیل علی صدیقی کے دلائل سنے کے بعد درخواست پر فیصلہ محفوظ کرلیا ہے۔پٹشنر کے وکیل نے عدالت کو درخواست کی قانونی معیاد اور دیگر پہلوں پر دلائل دیے تھے۔(بقیہ نمبر2صفحہ 5پر)

 سید عبدالقادر گیلانی نے اپنی درخواست میں موقف اختیار کیا کہ 2018 کے عام انتخابات میں دھاندلی کی گئی ہے، امیدواروں کو فارم 45 نہیں دیا گیا، احمد حسین ڈیہڑ نے اثاثہ جات بھی چھپائے ہیں، ان کے وکلا کا کہنا ہے کہ اگر فیصلہ خلاف آتا ہے تو اپیل کا حق رکھتے ہیں،ووٹوں کی گنتی میں دھاندلی ہوئی، مسترد ووٹوں کی تعداد زیادہ ہیں،فارم 45 فارم بھی نہیں دیا گیا،عدالت نے الیکشن کمیشن سے ریکارڈ بھی طلب کیا تھا احمد حسین ڈیہڑ مسلسل غیر حاضر رہے ہیں۔

محفوظ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -