حصص کی خریداری، ڈاؤلینس اورہٹاچی کے درمیان معاہدہ

حصص کی خریداری، ڈاؤلینس اورہٹاچی کے درمیان معاہدہ

  

کراچی(پ ر)آرشلک اے ایس (ڈاؤلینس)اور ہٹاچی گلوبل لائف سولوشنز انکارپوریٹیڈ (”ہٹاچی جی ایل ایس“)نے حصص کی خریداری کے ایک معاہدے پر دستخط کیے ہیں جس کا مقصد ایک جوائنٹ وینچر کمپنی قائم کرنا ہے۔اس تاریخی شراکت سے ایشیا اور بحرالکاہل کے علاقے میں ایک بڑا ادارہ وجود میں آئے گا۔ ایشیا اور بحرالکاہل کا علاقہ ہوم اپلائنسز کے حوالے سے دنیا کی سب سے بڑی مارکیٹ ہے جس کی فروخت کو مشترکہ و مسابقتی سپلائی چین کے ذریعے وسعت دی جائے گی۔دونوں اداروں کے درمیان 300 ملین امریکی ڈالرز کی اس ٹرانزیکشن کے ذریعے ہٹاچی جی ایل ایس ایک نئی کمپنی قائم کرے گا اور اس طرح ہوم اپلائنسز کے عالمی کاروبار کو جاپان سے باہر منتقل کرے گا۔ اس نئی کمپنی میں آرشلک کا حصہ 60 فیصد ہوگااور،ریگولیٹری منظوریاں حاصل ہونے کے بعد،دونوں شراکت دار مل کر سنہ 2021ء کے موسم بہار تک، ایک نئی کمپنی قائم کریں گے۔آرشلک اپنے ہوم اپلائنسز کے کاروبار کو دنیا کے 145 ممالک میں مسلسل وسعت دے رہا ہے۔ یہ ادارہ یورپ کا دوسرا سب سے بڑا مینوفیکچرر ہے اور ساتھ ہی جنوبی ایشیا میں بھی مستحکم ترقی حاصل کر رہا ہے۔ ہٹاچی جی ایل ایس، اس وقت،جنوبی مشرقی ایشیا اور مشرق وسطیٰ میں کام کر رہا ہے جہاں اِس کے برانڈ کے بارے میں نہایت عمدہ تصور پایا جاتا ہے۔ نیا جوائنٹ وینچر،جاپان سے باہر، عالمی مارکیٹ میں ریفریجریٹرز، واشنگ مشینز اور ویکیوم کلینرزوغیرہ سمیت،ہٹاچی برانڈ کے ہوم اپلائنسز تیار اور فروخت کرے گا اور آفٹر سیلز سروسز فراہم کرے گا۔ آرشلک اور ہٹاچی جی ایل ایس ایک مسابقتی ویلیو چین تخلیق کرنے کے لیے،حکمت عملی کے حوالے سے، دونوں کمپنیوں کی صلاحیتوں سے فائدہ اٹھانا چاہتے ہیں اورترقی کے ایسے امکانات پیدا کرنا چاہتے ہیں جس سے نئی مارکیٹوں تک اْن کی رسائی میں اضافہ ہو۔ اِسی کے ساتھ دونوں کمپنیاں اپنی  پروڈکٹس کی رینج اور سیلز کی صلاحیتوں میں اضافہ کرنے کے علاوہ مسابقت میں اضافہ اور، اپنی پور ی سپلائی چین اور پروڈکشن آپریشنزمیں، جغرافیائی محل وقوع سے بھی فائدہ حاصل کرنا چاہتی ہیں۔جاپان سے باہر قائم کیے جانے والا یہ جوائنٹ وینچر ہٹاچی جی ایل ایس گروپ کی دو مینوفیکچرنگ کمپنیوں، دس سیلز کمپنیوں اور3,800 ملازمین پر مشتمل ہو گا۔آرشلک اور ہٹاچی جی ایل ایس کا مشترکہ پورٹ فولیو 1.0 ارب امریکی ڈالرز کے سیلز ریونیو کا حامل ہے۔ بجلی کے استعمال میں بچت کرنے والی ٹیکنالوجیز اور دونوں کمپنیوں کی مہارت کے اشتراک سے کاروبار میں مزید استحکام آئے گا اور اہم شعبوں مثلاً ریسرچ اینڈ ڈیویلپمنٹ، پروکیورمنٹ اور پروڈکشن سسٹمز میں مشترکہ کوششوں کے قابل بنائے گا، جن کا مقصد ہٹاچی برانڈ کی مصنوعات کی فروخت کو یورپ، ایشیا اور افریقہ تک وسعت دینا ہے۔اس جوائنٹ وینچر کے حوالے سے پاکستان میں آرشلک کے کل ملکیتی ذیلی ادارے ڈاؤلینس کے چیف ایگزیکٹو آفیسر، عمر احسن خان نے کہا:”دو عالمی اداروں کے درمیان، وسائل سے بھرپور تعاون، دیکھنا خوشی کی بات ہے۔ یہ شراکت پاکستان اور بالخصوص ڈاؤلینس کے لیے  جو پاکستان میں ہوم اپلائنسز کا نمبر 1 برانڈ ہے - اقتصادی فوائد کے یقینی امکانات رکھتی ہے۔ہم برانڈ کے فیچر میں مزید اضافے، وسیع تر ویڑن اور بین الاقوامی باہمی تعاون سے، زیادہ سے زیادہ، فائدہ اٹھانے کی خواہش رکھتے ہیں۔ ایشیا اور بحرالکاہل میں پائے جانے والے ممتاز برانڈ ہٹاچی کے ساتھ،اِس جوائنٹ وینچر کے ذریعے،آرشلک جلد ہی، اس خطے میں، ایک بڑی قوت کے طور پر ابھرے گا۔

مزید :

کامرس -