"سعیدغنی غلط اعدادوشمار پیش کرکے اپنی ہی پارٹی کے فیصلے چیلنج کر رہے ہیں" زلفی بخاری کا دعویٰ

"سعیدغنی غلط اعدادوشمار پیش کرکے اپنی ہی پارٹی کے فیصلے چیلنج کر رہے ہیں" ...

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)معاون خصوصی زلفی بخاری نے کہا ہے کہ ورکرز ویلفیئر فنڈز غریبوں اور مزدوروں کا پیسہ تھا، پیپلز پارٹی نے اپنے دور میں ای او بی آئی میں 350 غیر قانونی بھرتیاں کیں، اگلے سال پنشن ساڑھے 8 ہزار سے بڑھا کر 10 ہزار پر لے کر جاؤں گا،سعیدغنی نے میڈیاپربے بنیاداورغلط اعدادوشمارپیش کیے، اُنہوں نے اپنے ہی دور حکومت پر سوال اٹھایا اور اپنی ہی پارٹی کے فیصلوں کو چیلنج کرر ہے ہیں،زندگی میں کبھی اسرائیل نہیں گیا ،الزامات لگانے والوں کو  قانونی نوٹس بھیجیں گے۔

نجی ٹی وی کے مطابق اسلام آباد میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے اوورسیز سید  زلفی بخاری نے  کہا کہ پاکستان پیلز پارٹی نے اپنے دورِ حکومت کے دوران 2011میں ای او بی آئی اور ورکرز ویلفیئر فنڈز (ڈبلیو ڈبلیو ایف) کو موجودہ فہرست سے نکال کر بین الصوبائی تعاون ( آئی پی سی) ڈویژن کے ماتحت کیا جو وفاقی حکومت کے دائرہ اختیار میں آتا ہے،سعید غنی اپنی پارٹی کے فیصلے کو غلط قرار دیتے ہوئے  اپنی ہی پارٹی کے فیصلے کو چیلنج کررہے ہیں،وزیر تعلیم سندھ سعید غنی نے میڈیا پرغلط چیزوں کواجاگرکیا، آئی پی سی وفاقی حکومت کے ماتحت ہے۔ 2011 میں وفاق اور سندھ میں پیپلزپارٹی کی حکومت تھی اور ای او  بی آئی کو پیپلزپارٹی نے آئی پی سی کے ماتحت کیا تھا، انہوں نے سندھ میں کلیکشن کے اندر بھی لوٹ مار کی کوشش کی ہے۔انہوں نے کہا کہ  سی سی آئی کامشترکہ فیصلہ تھا کہ ای او بی آئی کو منتقل کیا جائے، حیران ہوں ڈیڑھ سال بعد ای او بی آئی کے لیے ان کو درد ہو رہا ہے،ورکرز ویلفیئر فنڈز کے تحت اِنہوں نے روات میں ایک پراپرٹی خریدی تھی، اس پراپرٹی کا کیس 2011 سے نیب میں ہے، روات کی پراپرٹی 71 لاکھ روپے کی خریدی گئی تھی ،آج اس کی قیمت 40 لاکھ ہے۔

ایک سوال کے جواب میں سید زلفی بخاری نے کہا کہ  ہماری حکومت میں سے کبھی بھی کوئی اسرائیل نہیں گیا،میں خود  زندگی میں کبھی اسرائیل نہیں گیا اور نہ ہی مجھے کوئی شوق ہے، الزام لگانے والوں کو میرے لندن کے وکلا لیگل نوٹس بھیجیں گے

مزید :

قومی -