خیبر پختون خوا قدرتی وسائل سے مالا مال ہے، محمود خان

خیبر پختون خوا قدرتی وسائل سے مالا مال ہے، محمود خان

  

لاہور(پ ر)خٰبر پختون خوا کے صوبائی وزیر سیاحت محمود خان نے کہا ہے کہ صوبہ خیبر پختون خوا قدرتی وسائل سے مالا مال ہے اور نہ صرف ملک بھر بلکہ بیرون ملک سے بھی سیاح قدرتی نظاروں کا لطف اٹھانے صوبے کے شمالی علاقوں کا دورہ کرتے ہیں اور انہیں یقین ہے کہ امن و امان کے قیام کے بعد سیاحوں کی بڑی تعداد خیبر پختون خوا سیر کے لئے آئے گی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے آگرہ میں تاریخی تاج محل کے دورے کے موقع پر مقامی میڈیا سے گفت گو میں کیا۔اس موقع پر وفد میں شامل فاٹا اولمپک ایسوسی ایشن کے سیکرٹڑی شاہد شنواری، ملک سعد میموریل اسپورٹس ٹرسٹ کے سید علی نواز گیلانی اور نسیم جاوید مفتی بھی ان کے ہمراہ تھے۔ محمود خان نے کہا کہ پاکستان اور بھارت کے درمیان تعلقات کی بہتری سے خطے میں امن و امان کی فضا بھی بہتر ہو گی اور خاص طور پر سیاحت کو فروغ حاصل ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ دونوں ملکون کے عوام ایک دوسرے کو بہت چاہتے ہیں اور دہلی کے دورے کے دوران عوام نے انہیں جو چاہت تھی وہ کبھی فراموش نہیں کی جائے گی۔ صوبائی وزیر سیاحت نے مقامی میڈیا کو بتایا کہ سوات کو ایشیا کا سوئٹزر لینڈ بھی کہا جاتا ہے جہاں کے حسین قدرتی نظارے دیکھنے والوں کو اپنے سحر میں جکڑ لیتے ہیں۔محمود خان نے مزید کہا کہ بھارتی سیاح جب بھی پشاور اور صوبے کے شمالی علاقوں کا دورہ کرنا چاہیں انہیں فول پروف سیکورٹی فراہم کی جائے گی۔اس موقع پر خیبرپختون خوا کے وفد کو محکمہ سیاحت دہلی کے حکام کی جانب سے تاریخٰ تاج محل کی سیر کروائی گئی اور بتایا گیا کہ دنیا کا عجوبہ قرار پانے والا یہ تاج محل بیس ہزار مزدوروں نے بائیس سال کے عرصے میں تیار کیا اور روزانہ تیس ہزار سے زیادہ سیاح تاج محل دیکھنے آتے ہیں جس سے محکمہ سیاحت کو کثیر آمدنی ہوتی ہے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -