سینئرصحافی سابق سینیٹر فصیح اقبال کی نماز جنازہ کراچی میں ادا کر دی گئی

سینئرصحافی سابق سینیٹر فصیح اقبال کی نماز جنازہ کراچی میں ادا کر دی گئی

کراچی (اسٹاف رپورٹر) سینئرصحافی سابق سینیٹر فصیح اقبال جن کا گزشتہ روز کراچی میں انتقال ہوگیا تھا ۔ان کی نماز جنازہ جمعہ کو گلستان جوہر میں ان کی رہائش گاہ کے نزدیک مسجد بلال میںادا کردی گئی ،جس میں زندگی کے مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والی شخصیات نے شرکت کی ۔نماز جنازہ میں سابق گورنر سندھ معین الدین حیدر ،سابق وفاقی وزیر اطلاعات جاوید جبار ،سابق وزیر اعلیٰ بلوچستان میر نصیر مینگل، روزنامہ پاکستان کے چیف ایڈیٹر اور سی پی این ای کے صدر مجیب الرحمن شامی ،مختارزبیری ،جبار خٹک ،سید سرمد علی ،مسعود حامد خان ،قاضی عابد ،ڈاکٹر تنویر ،اعجاز الحق ،الیاس شاکر ،مختار عاقل ،غلام چانڈیو ،نجم الدین شیخ ،واثق نعیم اوردیگر افراد نے شرکت کی ۔سید فصیح اقبال کی تدفین آج (ہفتہ) کوئٹہ میں ہوگی ۔سیدفصیح اقبال کو صحافتی خدمات کے اعتراف میں متعدد اعلیٰ ایوارڈز سے نوازا جاچکا ہے۔ ستارہ امتیاز اور ہلال امتیاز بھی حاصل کرچکے ہیں۔اے پی این ایس کی طرف سے لائف ٹائم اچیومنٹ ایوارڈ ،سعودی حکومت کی طرف سے ایمیننٹ جرنلسٹ ایوارڈ ،نظریہ پاکستان کی طرف سے پاکستان فریڈم موومنٹ گولڈ میڈل، ہیومن رائٹس پاکستان کی طرف سے ہیومن رائٹ ایوارڈ سے نوازا گیا۔ مرحوم نے روزنامہ زمانہ کی 1954 میں اشاعت شروع کی تھی۔وہ 2 بار سینیٹر منتخب ہوئے اور 9 سال تک سینیٹر رہے۔ مرحوم نے ہمیشہ بلوچستان میں تعلیم کے بہتر معیار کیلئے تگ و دو کی۔امریکا میں رائج نظام کا بغور مطالعہ کرنے کے بعد پاکستان میں پارلیمانی کمیٹی سسٹم متعارف کرایا۔ دریں اثناءاے پی این ایس کے صدر سرمد علی نے ان کے انتقال کو پاکستان کی اخباری صنعت کا نقصان قرار دیا ہے اور کہا ہے کہ مرحوم کی صحافتی خدمات برسوں یاد رکھی جائیں گی، ان کی موت سے پیدا ہونے والا خلا پورا نہ ہوسکے گا۔ انہوں نے مرحوم کی مغفرت کی دعا کرتے ہوئے اہل خانہ سے تعزیت کی ہے۔اے پی این ایس کے جاری کردہ بیان کے مطابق سیکرٹری جنرل مسعود حامد نے اعلان کیا ہے کہ 24فروری کو سید فصیح اقبال کی تعزیت کے سلسلے میں ایک اجلاس اے پی این ایس ہاو¿س میں ہوگا ۔

مزید : صفحہ اول