باجوڑ ،کروڑوں کی لاگت سے تعمیر ڈیری فارم میں سہولیات کی عدم دستیابی

باجوڑ ،کروڑوں کی لاگت سے تعمیر ڈیری فارم میں سہولیات کی عدم دستیابی

باجوڑ ایجنسی ( نمائندہ پاکستان )باجوڑ ایجنسی میں پہلی بار 10 کروڑ اور 35 روپے کی لاگت سے بنائے گئے ڈیری فارم میں عملہ اور دوسرے سہولیات کے عدم دستیابی سے کروڑوں روپے ضائع ہو رہے ہیں ڈیری فارم 16 کنال زمین پر تعمیر کیا گیا ہے جس میں بیک وقت پچاس جانوروں کو پالنے کی گنجائش موجود ہیں لیکن بدقسمتی سے اس فارم کو 35 گائے فراہم کئے گئے ہیں اور 27 کنال زمین پر تعمیر کو کم کرکے 16کنال کیا گیا ہے حالانکہ لائیوسٹاک حکام سے 27 کنال رقبے پر ڈیری فارم بنانے اور اس میں 50 جانور وں کو پالنے کیساتھ لوکل افراد کے بھرتی کا ایگریمنٹ کی سائن کیا تھا لیکن اس کے برعکس فارم کو صرف 35 گائے فراہم کئے گئے ہیں جس کے فی گائے قیمت تین لاکھ روپے اور آسٹریلین گائے لانے کو کہا گیا تھا لیکن فارم کو فراہم کئے گئیگائے نہ ااسٹریلوی نسل کے ہیں اور نہ تین لاکھ روپے کے اس کیساتھ لوکل افراد کی جگہ اس میں نان لوکل افراد کو تعینات کیا گیا ہے ان خیالات کا اظہار مذکورہ ڈیری فارم کیلئے دئیے گئے مالک برہان زیب نے اپنے رہائش گاہ میں ایک پُرہجوم کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ فاٹا لائیو سٹاک ڈائریکٹر نے ہم سے اگریمنٹ کیا تھا کہ وہ27 کنال رقبے پر محیط ڈیری فارم بنائے گے اور اس کیساتھ وہ اس فارم کیلئے لوکل ڈومیسائل افراد کو بھرتی کرینگے لیکن اس کے برعکس اُنہوں نے 27 ملازمین کے بھرتی کے بجائے 16 ملازمین بھرتی کئے جن میں چند کے علاوہ ذیادہ تر نان لوکل ملازمین ہیں جن میں اکثر محکمہ لائیو سٹاک کے آشیر آباد سے ڈیوٹیوں سے غیر حاضر رہتے ہیں اور گھروں میں بیٹھ کر تنخواہیں وصول کر تے ہیں اُنہوں نے یہ بھی کہا کہ ڈیری فارم کو دئیے گئے گاڑیاں جن میں موٹر کار ،سوزوکی اور ٹریکٹر بھی شامل ہیں اس فارم کے نام سے نکال لئے گئے ہیں لیکن وہ بھی ڈائریکٹر لائیو سٹاک ذاتی طور پر استعمال کر رہے ہیں اُنہوں نے کہا کہ ہم نے بار بار شکایات کئے لیکن فاٹا سیکرٹریٹ اور لائیو سٹاک حکام کی طرف سے کوئی شنوائی نہیں ہو رہی اور چونکہ مذکورہ فارم کو میں نے باجوڑ ایجنسی کے عوام اور علاقے کے مفاد کیلئے زمین دی تھی لیکن اس سے عام عوام کو کوئی فائدہ نہیں پہنچتا یہاں تک کہ فارم میں موجود 35 گائیوں کے دودھ کو بھی غائب کیا جا رہا ہے جس کا کوئی اڈٹ نہیں ہو رہا ہے اُنہوں نے محکمہ نیب ،گورنر خیبر پختونخوا ،پولٹیکل ایجنٹ باجوڑ اور لائیو سٹاک کے حکام سے پُر زور مطالبہ کیا کہ مذکورہ ڈیری فارم کا شفاف طریقے سے انکوائری اور اڈٹ کیا جائے ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر