ایک دفعہ منشی بھاگتا بھاگتا آیا اور کہا ں صاحب جی ۔۔۔۔۔۔چیف جسٹس نے ایسا واقعہ سنا دیا کہ تقریب میں قہقہے لگ گئے

ایک دفعہ منشی بھاگتا بھاگتا آیا اور کہا ں صاحب جی ۔۔۔۔۔۔چیف جسٹس نے ایسا ...
ایک دفعہ منشی بھاگتا بھاگتا آیا اور کہا ں صاحب جی ۔۔۔۔۔۔چیف جسٹس نے ایسا واقعہ سنا دیا کہ تقریب میں قہقہے لگ گئے

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)چیف جسٹس ثاقب نثار نے کہا کہ جب لاہور ہائیکورٹ بنا ہوگا تو چندوکلاہوں گے ،دو کورٹ روم تھے وہیں پر کلائنٹ بھی آجاتا ہوگا۔

چیف جسٹس آف پاکستان نے ایک واقعہ سناتے ہوئے کہا کہ ایم انور صاحب بڑے پائے کے وکیل تھے ایک وقت ان پر بھی آیا اور یہ واقعہ مجھے ایم اے رحمان نے بھی سنایا  تھا ،ہوا کچھ یوں کہ ایک دفعہ منشی بھاگتا بھاگتا ایم انور صاحب کے پا س آیا اور کہا کہ آپ کا کلائنٹ آیا ہے آپ میرے ساتھ چلیں۔

چیف جسٹس آف پاکستان نے بتایا کہ اس پر ایم اے انور صاحب اس کی سائیکل کے پیچھے بیٹھ گئے اس وقت  ان کا دفتر ایمپریس روڈ تھاجس پر ایم اے انور صاحب نے کہا کہ یار تو اتنی دیر سے مجھے لے جا رہا ہے کہیں وہ چلا نہ جائے تومنشی نے جواب دیا کہ صاحب جی فکرنہ کریں میں باہر سے کمرے کی کنڈی لگا آیا ہوں جس پر تقریب میں قہقہے بلند ہو گئے۔

مزید : قومی /علاقائی /اسلام آباد