بد اخلاقی کے ملزموں کو سرعا م سزائے موت دی جائے،عاکف سعید

        بد اخلاقی کے ملزموں کو سرعا م سزائے موت دی جائے،عاکف سعید

  



لاہور(نمائندہ خصوصی)تنظیم اسلامی کے امیر حافظ عاکف سعید نے ملک میں معصوم بچوں کے ساتھ بد اخلاقی کے نتیجے میں بہیمانہ قتل کے بڑھتے ہوئے واقعات پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ بداخلاقی کے واقعات میں ملوث افراد کسی نرمی کے مستحق نہیں۔ قرآن و سنت کی تعلیمات کے مطابق ایسے افراد کو سرعام سزائے موت دی جانی چاہیے۔ امیر تنظیم نے کہا کہ ہم حکومت سے پُرزور مطالبہ کرتے ہیں کہ جنسی درندگی میں ملوث افراد کو سرعام قرارواقعی سزا دیے جانے کے حوالے سے قانون سازی کی جائے۔ کیونکہ یہ شریعت محمدی (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کا عین تقاضا ہے۔

امیر تنظیم اِسلامی نے جرمنی میں ایک انتہا پسند شخص کی فائرنگ سے 9مسلمانوں کی شہادت اور برطانیہ کی ریجنٹ پارک مسجد میں مؤذن کو زخمی کیے جانے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ان واقعات سے بخوبی اندازہ لگایا جا سکتا ہے کہ مغرب کی اسلام دشمنی کس حد تک بڑھ چکی ہے اور مغربی سوسائٹی اسلاموفوبیا میں بُری طرح مبتلا ہو چکی ہے۔ ستم بالائے ستم یہ ہے کہ ان ممالک کی حکومتیں اِن واقعات کو دہشت گردی قرار دیے جانے سے انکاری ہیں اور مذکورہ واقعات میں ملوث افراد کو ذہنی مریض اور نسل پرست قرار دے رہی ہیں جبکہ یہ واقعات کھلی دہشت گردی کے ذیل میں آتے ہیں۔ مغرب کو اپنی سوچ کا دہرا معیار ترک کر کے مذکورہ واقعات کو کھلی دہشت گردی قرار دینا ہو گا اور ان واقعات میں ملوث افراد کو قرارواقعی سزا دینی ہو گی۔

مزید : میٹروپولیٹن 1