سیکولر اور جمہوری بھارت آج دنیا میں نفرت کی علامت بن چکا،فخر امام

    سیکولر اور جمہوری بھارت آج دنیا میں نفرت کی علامت بن چکا،فخر امام

  



اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) چیئرمین کشمیر کمیٹی سید فخر امام نے کہا ہے کہ بھارت کی جانب سے کشمیر کی خصوصی حیثیت کی تبدیلی کے پانچ اگست کے اقدام کے بعد دنیا میں بھارت کے حوالے سے نکتہ نظر میں بنیادی تبدیلی آئی ہے۔ بھارت میں انتخابات قریب آنے پر مودی کی جانب سے پلوامہ واقعہ کے بعد کی طرح کی حماقت کا خطرہ موجود ہے تاہم وہ یاد رکھے کہ پاکستان کسی بھی قسم کی جارحیت سے نمٹنے کے لئے مکمل طور پر تیار ہے‘ اندرونی سیاسی اختلافات کے باوجود کشمیر کے تنازعہ پر پوری قوم متحد ہے‘ سیکولر اور جمہوری بھارت آج دنیا میں نفرت کی علامت بن چکا ہے کشمیر وپاکستان لازم وملزوم ہیں ہم ایک لمحہ کیلئے بھی کشمیر کو نظر انداز نہیں کرسکتے۔ بھارت کی انتہا پسندانہ پالیسیوں کے نتیجے میں سارے بھارت میں مودی کے خلاف احتجاج جاری ہے۔ مودی نے جمہوری اقدار دفن کردی ہیں۔عالمی برادری بھارت کے انتہا پسندانہ اقدامات کا نوٹس لے اقوام متحدہ کشمیر سے متعلق اپنی قراردادوں پر عملدرآمد کرواے مسئلہ کشمیر حل کیے بغیر خطے میں امن کا قیام ممکن نہیں ہے۔ گزشتہ روزیہاں جموں کشمیر سالویشن موومنٹ کے زیر اہتمام کشمیر سیمینار سے خطاب کرتے ہوے سید فخر امام نے کہا کہ پاکستان کشمیریوں کی حق خودارادیت کی جدوجہد کی حمایت جاری رکھے گا۔عالمی اداروں کی رپورٹس میں مقبوضہ وادی میں بھارتی مظالم بے نقاب ہیں بھارت نہتے کشمیریوں پر اپنے مظالم بند کرے۔

فخر امام

مزید : صفحہ اول