اگر آپ یہ گھر خرید لیں تو 2ملکوں میں بیک وقت رہ سکتے ہیں

اگر آپ یہ گھر خرید لیں تو 2ملکوں میں بیک وقت رہ سکتے ہیں
اگر آپ یہ گھر خرید لیں تو 2ملکوں میں بیک وقت رہ سکتے ہیں

  



اوٹاوا(مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان سمیت بعض ممالک کے شہری بیک وقت دو ملکوں کی شہریت تو رکھ سکتے ہیں لیکن کیا یہ ممکن ہے کہ آپ ایک ہی گھر میں رہتے ہوئے بیک وقت دو ملکوں میں رہیں؟ بالکل ایسا ممکن ہے لیکن اس کے لیے آپ کو امریکہ اور کینیڈا کے بارڈر پر واقع یہ گھر خریدنا ہو گا جو آدھا امریکہ میں ہے اور آدھا کینیڈا میں۔ اس گھر میں رہتے ہوئے نہ صرف آپ بیک وقت دو ملکوں کے شہری ہوں گے بلکہ بیک وقت دونوں ملکوں میں ہی مقیم ہوں گے۔

ٹائمز آف انڈیا کے مطابق یہ 7ہزار مربع فٹ کا عالیشان گھر امریکی ریاست ورمونٹ اور کینیڈین صوبے کیوبیک کے بارڈر پر ہے، جس کی قیمت 1لاکھ 9ہزار ڈالر (تقریباً 1کروڑ 68لاکھ روپے )ہے۔اس گھر کے مالک بریان اور جواین ڈومولین ہیں جنہیں 40سال قبل یہ گھر وراثت میں ملا۔ اس گھر کے ایک طرف کینیڈا بارڈر سروسز ایجنسی کا دفتر ہے جبکہ دوسری طرف امریکی کسٹمز اینڈ بارڈر پروٹیکشن پوسٹ ہے۔ اس گھر پر کئی لوگوں کی نظر ہے جو اسے خریدنا چاہتے ہیں لیکن بریان ڈومولین کے لیے اس گھر کو فروخت کرنا بہت مشکل ہے کیونکہ اییک طرف اس گھر کا تزئین و آرائش کا بہت کام ہونے والا ہے اور دوسری طرف اس گھر کے متعلق کئی طرح کی سکیورٹی بندشیں ہیں جو آڑے آتی ہیں۔

بریان ڈومولین نے ٹائمز سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ ”یہ گھر عام گھروں کی طرح نہیں ہے جن میں آپ آزادانہ ادھر ادھر گھوم سکتے ہیں۔ اس گھر میں کینیڈا والے حصے سے امریکہ والے حصے میں جانے سے قبل ضروری قانونی کارروائی ہوتی ہے اور پھر واپس دوسرے حصے میں جانے کے لیے دوبارہ اسی کارروائی سے گزرنا پڑتا ہے۔ پراپرٹی ایجنٹس ہفتے میں درجن بھر گاہکوں کو گھر دکھانے لاتے ہیں۔ ایک بار ایک امریکی پراپرٹی ایجنٹ ایک جوڑے کو یہ گھر دکھانے لایا۔ یہ لوگ امریکہ کی طرف سے گھر میں داخل ہوئے تھے او رگھر دیکھتے ہوئے خاتون غلطی سے کینیڈا والے حصے میں چلی گئی۔ مجھے خاتون کے کینیڈا میں داخل ہونے کے متعلق کینیڈین بارڈر پوسٹ کو رپورٹ کرنا پڑا اور 45منٹ میںمعاملہ طے ہوا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس