ٹوئٹر اور واٹس ایپ سے حکومتیں نہیں چلتیں، اخترحسین لانگو وزیر اعلیٰ بلوچستان کے خلاف لنگوٹ کس کر میدان میں آ گئے

ٹوئٹر اور واٹس ایپ سے حکومتیں نہیں چلتیں، اخترحسین لانگو وزیر اعلیٰ ...
 ٹوئٹر اور واٹس ایپ سے حکومتیں نہیں چلتیں، اخترحسین لانگو وزیر اعلیٰ بلوچستان کے خلاف لنگوٹ کس کر میدان میں آ گئے

  



کوئٹہ(ڈیلی پاکستان آن لائن) بلوچستان نیشنل پارٹی کے رہنماء اور  پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کے چیئرمین اخترحسین لانگو نے کہا ہے کہ بلوچستان حکومت ہر شعبے میں مکمل طورپر ناکام ہو چکی ہے،ٹوئٹر اور واٹس ایپ سے حکومتیں نہیں چلتیں بلکہ حکومت کے لئے سیاسی وژن اور عوام کے مفادات کا خیال رکھا جاتا ہے ،صوبائی حکومت اپوزیشن کے حلقوں میں مداخلت کرکے غیرمنتخب لوگوں کے ذریعے فنڈز کی تقسیم کررہی ہے جس کو ہم کسی بھی صورت برداشت نہیں کریں گے۔

تفصیلات کے مطابق اختر حسین  لانگو نے کہاکہ جو وزیراعلیٰ یا صوبائی وزراء صرف ٹوئٹر اور فیس بک پر اپنے منصوبوں کے دعوی کرتے ہیں، وہ حقیقی معنوں میں عوام کا سامنا کرنے سے قاصر ہیں، حکومتیں ٹوئٹرکے ذریعے نہیں بلکہ سیاسی وژن کے تحت چلائی جاتی ہیں، جو حکمران عوام کے دکھ اور درد میں شریک نہیں ہو سکتے انہیں حکمرانی کا کوئی حق نہیں، بلوچستان کے حکمرانوں کو صوبہ کے عوام سے زیادہ شیخوں سے محبت ہے، جو نمائندہ چند قدم کے فاصلے پر شہداء کی فاتحہ خوانی کے لئے نہیں جاسکتے وہ شیخ کی رخصتی کے لئے کئی کلومیٹر جاتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اپوزیشن جماعتیں کئی ماہ سے صوبے کے مختلف ایشو پر سراپا احتجاج ہیں مگر اس کے باوجود حکومت ٹس سے مس نہیں ہورہی، اگر حکومت اپنی کارکردگی دکھاتی تو اپوزیشن جماعتیں سڑکوں پر نہیں ہوتیں۔ انہوں نے کہا کہ وقت اور حالات کا تقاضا ہے کہ اپوزیشن جماعتیں اب بلوچستان کے حقوق اور مفادات پر کوئی سمجھوتہ نہیں کریں گے،عوام کے حقوق کے لئے ہر قربانی دینے کے لئے تیار ہیں، عوام کے مفادات کی خاطر ہمارا احتجاج سڑکوں کی حد تک نہیں رہے گا بلکہ ہم احتجاج کے ہر راستے کو اپنائیں گے۔

مزید : علاقائی /بلوچستان /کوئٹہ