بھارتی یوم جمہوریہ مقبوضہ کشمیر میں سیکیورٹی انتہائی سخت کر دی گئی

بھارتی یوم جمہوریہ مقبوضہ کشمیر میں سیکیورٹی انتہائی سخت کر دی گئی

جموں(کے پی آئی)بھارتی یوم جمہوریہ کی تقریبات کے پیش نظر مقبوضہ کشمیربالخصوص دارالحکومت سری نگر میں حفاظتی انتظامات انتہائی سخت کئے جارہے ہیں جبکہ جموں میں مجاہدین کے حملوں کے خطرے کے پیش نظر پہلے ہی سیکورٹی ہائی الرٹ ہے۔ کشمیر سے کنیاکماری تک ہائی الرٹ کے بیچ سرحدی حفاظتی فورس(بی ایس ایف) کو بین الاقوامی سرحد پر دراندازی کے خدشات کے پیش نظردیکھتے ہی گولی مارنیکی ہدایات جاری کی گئی ہیں۔یوم جمہوریہ کے سلسلے میں مقبوضہ وادی کشمیر میں سب سے بڑی تقریب بخشی اسٹیدیم جبکہ جموں میں سب سے بڑی تقریب مولانا آزاد اسٹیڈیم میں منعقد ہوگی۔ ریاست میں اس وقت گورنر راج نافذہونے کی وجہ سے ریاستی گورنر این این ووہرا مولانا آزاد اسٹیڈیم جموں جبکہ وادی کشمیر کے ڈویڑنل کمشنر روہت کنسل بخشی اسٹیڈیم سری نگر میں پرچم کشائی کی رسم انجام دیں گے۔ دونوں اسٹیڈیموں (سری نگر اور جموں)میں یوم جمہوریہ کی تقریبات کے احسن انعقاد کیلئے گرد ونواح میں سیکورٹی کا سخت بندوبست کیا گیا ہے۔کسی بھی ناگہانی واقعہ سے نمٹنے کیلئے بخشی اسٹیڈیم کے گردونواح میں ریاستی پولیس اور نیم فوجی دستوں کی بھاری نفری کو تعینات کیا گیا ہے جبکہ جموں کے مولانا آزاد اسٹیڈیم کے داخلی اور خارجی پوائنٹس پر گاڑیوں کی تلاشی کا عمل شروع کردیا گیا ہے۔ قابل ذکر ہے کہ ملک کی راجدھانی دہلی میں منعقد ہونے والی یوم جمہوریہ کی تقریب میں امریکی صدر بارک اوباما بحیثیت مہمان خصوصی شرکت کرنے والے ہیں جس کے پیش نظر دہلی کے ساتھ ساتھ جموں وکشمیر میں سیکورٹی انتہائی سخت کردی گئی ہے ۔کیونکہ فوج نے گذشتہ ہفتے جموں وکشمیر میں پشاور کے طرز پر حملے کا اندیشہ ظاہر کردیا۔فوج کے وائٹ نائٹ کور 16 (کارپس)کے جنرل آفیسر کمانڈنگ(جی او سی) لیفٹیننٹ جنرل کے ایچ سنگھ نے دعوی کیا کہ جنگجو امریکی صدر بارک اوباما کے دورہ ہندوستان کے موقع پر جموں وکشمیر میں سافٹ ٹارگیٹس کے مرتکب ہوسکتے ہیں۔ انہوں نے بتایا تھا کہ فوج کے پاس حملوں سے متعلق مصدقہ اطلاعات نہیں ہیں مگر ماضی میں انتہائی اہم شخصیات کے دورہ ہندوستان کے موقع پر تخریب کاری کے واقعات پیش آچکے ہیں۔ سیکورٹی ذرائع نے بتایا کہ مجاہدین کی جانب سے امریکی صدر بارک اوبامہ کے دورہ ہندوستان کے موقع پر وادی کشمیر میں امن وقانون میں رخنہ ڈالنے کی کوششوں کو ناکام بنانے کیلئے تمام فیلڈ کمانڈروں کے لئے تازہ الرٹ جاری کردیا گیا ہے اور انہیں کہا گیا ہے کہ وہ صورتحال پر قریبی نگاہ بنائے رکھیں۔

سرکاری ذرائع نے بتایا کہ اگرچہ وادی کشمیر میں سیکورٹی فورسز پہلے سے ہی الرٹ پر ہیں تاہم مختلف سیکورٹی ایجنسیوں کے فیلڈ کمانڈروں کو اپنے اپنے علاقوں میں صورتحال پر قریبی نگاہ رکھنے کی ہدایات جاری کردی گئی ہیں۔ یوم جمہوریہ کی تقریبات کے حوالے سے جموں اور اس کے ملحقہ علاقوں میں بھی سیکورٹی سخت کردی گئی ہے جبکہ باضابطہ طور پر ہائی الرٹ جاری کردیا گیا ہے۔ سیکورٹی ذرائع نے بتایا کہ جموں میں سیکورٹی فورسز کی اضافی نفری تعینات کی گئی ہے، چیک پوائنٹس قائم کردیئے گئے جبکہ مولانا آزاد اسٹیڈیم کے داخلی اور خارجی پوائنٹس پر گاڑیوں کی تلاشی کا عمل شروع کردیا گیا ہے۔انہوں نے بتایا کہ حفاظتی اہلکاروں اور خاص طور پر لائن آف کنٹرل اور بین الاقوامی سرحد پر فوجی جوانوں کو ہدایت دی گئی ہے کہ وہ ڈیوٹی کے دوران چوکنا رہیں۔

مزید : عالمی منظر


loading...