دہشتگردی یا کسی جرم میں ملوث موبائل سم استعمال کرنیوالوں کیخلاف کارروائی کی جائیگی، عمر ورک

دہشتگردی یا کسی جرم میں ملوث موبائل سم استعمال کرنیوالوں کیخلاف کارروائی کی ...

لاہور(کرائم سیل)ایس پی سی آئی اے محمد عمر ورک نے کہا ہے کہ جو موبائل فون سم کسی جرم یا دہشت گردی کے واقعہ میں ملوث پائی گئی ۔ اس سم کو استعمال کرنے والے کے خلاف قانونی کاروائی عمل میں لائی ہی جائے گی لیکن جس فرنچائز یا شخص نے یہ سم جاری کی ہو گی اس کے خلاف بھی قانون کی دفعہ 109کے تحت کاروائی عمل میں لائی جائے گی۔اُنہوں نے مزید کہا کہ غیر قانونی موبائل فونز سمز کے خلاف جاری کاروائیوں کے دوران سی آئی اے پولیس نے غیر قانونی موبائل فون سمز فروخت کرنے والے 8مختلف فرنچائز مالکان احتشام علی، رضوان ارشد، محمد عباس، محمد زاہد،افتخار حسین، عابد علی، محمد سلمان اور حافظ محمد ارشد کو گرفتار کر کے ان کے خلاف تھانہ نولکھا اور لاری اڈا میں مقدمات درج کر لیے ہیں اور ان سے مجموعی طور 200موبائل فون سمز برآمد کر لی ہیں۔

مزید : علاقائی


loading...