دہشتگردی کے خطرہ کے پیش نظر جیلوں میں قیدیوں کو پھانسی دینے کا صدیوں پرانا وقت تبدیل

دہشتگردی کے خطرہ کے پیش نظر جیلوں میں قیدیوں کو پھانسی دینے کا صدیوں پرانا ...

 لاہور(انویسٹی گیشن سیل) پنجاب حکومت نے دہشت گردی کے خطرات کے پیش نظر جیلوں میں قیدیوں کو پھانسی دینے کا صدیوں پرانا وقت تبدیل کر دیا ہے ۔ پھانسی دینے کا وقت تبدیل کر نے کے لئے پنجاب پریژن رولز کی دفعہ 361میں تر میم کی گئی ہے ۔ آئندہ جیل سپر نٹنڈنٹ عدالت کی جانب سے ڈیتھ وارنٹ جاری ہو نے کے بعد مقررہ تاریخ پر دن کے کسی بھی وقت پھانسی دینے کاحکم جاری کر سکے گا ۔تفصیلات کے مطابق پنجاب پریژن رولز کے مطابق جیلوں میں قید ملزمان کو تختہ دار پر چڑھا ئے جا نے کا وقت مقرر کیا گیا ہے ۔ جس کے مطابق موسم گر مامیں قیدیوں کو پھانسی دینے کا وقت صبح ساڑھے 4بجے جبکہ موسم سر ما میں پھانسی کا وقت صبح 6بجے کے بعد کامقرر ہے ۔اور صدیوں سے مقررہ وقت کے مطابق ہی جیلوں میں قید ملزمان کو تختہ دار پر چڑھا یا جا رہا ہے ۔ معتبر ذرائع نے بتا یا ہے کہ محکمہ جیل خانہ جا ت کے اعلی حکام نے پنجاب حکومت سے درخواست کی تھی کہ جیلوں میں قید ملزمان کو تختہ دار پر چڑھا ئے جا نیکا وقت سب کو معلوم ہے۔ ملک میں حالیہ دہشت گردی کی لہر کے پیش نظر جیلوں میں قید ملزمان کو پھانسی دینے کے وقت کوئی بڑا سانحہ رونما ہو سکتا ہے ۔ کیو نکہ وفاقی حکومت کے اعلان سے پھانسیوں کا عمل دوبارہ شروع ہو نے سے جیلوں میں حملوں کا خطرہ پیدا ہوگیا ہے ۔ اور متعدد جیلوں کی انتظامیہ کو دہشت گردوں کی جانب سے حملوں کی اطلاع بھی موصول ہو چکی ہیں۔ محکمہ جیل کے حکام نے پنجاب حکومت سے صدیوں پرا نا پھانسی دینے کا وقت تبدیل کر نے کا مطا لبہ کیا ۔ ذرائع نے بتا یا ہے کہ پنجاب حکومت نے آئندہ جیلوں میں قید ملزمان کو تختہ دار پر چڑھا نے کا وقت تبدیل کر دیا ہے ۔ وقت کی تبدیلی پنجاب پر یژن رولز کی دفعہ 361میں تر میم کے تحت کی گئی ہے ۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ نئے نوٹیفکیشن کے مطابق جیل سپر نٹنڈنٹ کے پاس مکمل اختیار ہو گا کہ وہ ڈیتھ وارنٹ جاری ہو نے کے بعد مقررہ تاریخ پر دن کے کسی بھی وقت میں قیدی کو تختہ دار پر چڑھا نے کا حکم دے سکے ۔ پھانسی دینے سے ایک دن قبل قیدی کے لواحقین سے ملاقات کر وائی جا ئے گی ۔پنجاب حکومت نے گزشتہ روزپھانسی کے اوقات میں تبدیلی کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا ہے ۔

مزید : صفحہ اول


loading...