سیکرٹری الیکشن کمیشن پاکستان کے وارنٹ گرفتاری جاری

سیکرٹری الیکشن کمیشن پاکستان کے وارنٹ گرفتاری جاری
سیکرٹری الیکشن کمیشن پاکستان کے وارنٹ گرفتاری جاری

  


لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے اراکین قومی و صوبائی اسمبلی کی دوبارہ جانچ پڑتال کرانے کے لئے دائر درخواست میں عدالتی حکم کے باوجود جواب داخل نہ کرانے پر سیکرٹری الیکشن کمیشن پاکستان کے قابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کر دیئے۔مسٹر جسٹس شہزادہ مظہر نے تحریک انصاف کے کارکن جاوید بدر کی طرف سے دائر آئینی درخواست کی سماعت کی، درخواست گزار کے وکیل وقار مشتاق طور نے موقف اختیار کیاکہ الیکشن کمیشن نے اپنی جائزہ رپورٹ میں اعتراف کیا ہے کہ ریٹرننگ افسران ، نیب اور ایف آئی اے سمیت دیگر اداروں پر مشتمل کمیٹی نے امیدوراوں کی سکروٹنی کا عمل درست طریقہ سے نہیں کیا جبکہ مختلف سیاسی جماعتوں کی طرف سے الزامات کے بعد 2013کے عام انتخابات متنازع ہو چکے ہیں اور ٹیکس ڈیفالٹر اور چور اسمبلیوں میں پہنچ گئے ہیں۔

پیر پگاڑا کی بلاول بھٹوسے متعلق پیشن گوئی سچ ثابت ہونے والی ہے :ارباب غلام رحیم

انہوں نے بتایا کہ دوہری شہریت کیس کی بنیاد پر الیکشن کمیشن کسی بھی وقت اراکین اسمبلی کی جانچ پڑتال کی جاسکتی ہے لہذا اراکین قومی اور صوبائی اسمبلی کی آرٹیکل 62اور 63 کی روشنی میں دوبارہ سکروٹنی کا حکم دیا جائے، ایڈووکیٹ وقار مشتاق طور نے بتایا کہ الیکشن کمیشن کو دو مرتبہ نوٹس جاری ہو چکے ہیں مگر الیکشن کمیشن جواب جمع نہیں کرارہا، اس نشاندہی پر عدالت نے سخت برہمی کا اظہار کرتے ہوئے سیکریٹری الیکشن کمیشن کے قابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کرتے ہوئے انہیں 10 فروری کو پیش ہونے کا حکم دے دیا۔عدالت نے قرار دیا کہ عدالتی احکامات سے متعلق سرکاری اداروں کا رویہ غیر سنجیدہ ہے۔

مزید : قومی /اہم خبریں


loading...