اجنبی افراد کی جانب سے خاتون کی تصاویر کا 10 سال تک غیر اخلاقی استعمال

اجنبی افراد کی جانب سے خاتون کی تصاویر کا 10 سال تک غیر اخلاقی استعمال
اجنبی افراد کی جانب سے خاتون کی تصاویر کا 10 سال تک غیر اخلاقی استعمال

  


لاس اینجلس (نیوز ڈیسک) انٹرنیٹ کی دنیا شعبدہ بازی اور دھوکہ بازی کی دنیا بن چکی ہے اور حقیقت یہ ہے کہ اکثر آپ فیس بک پر جس حسینہ سے محبت کر رہے ہوتے ہیں اس نے اپنی اصل شکل کی جگہ کسی دلکش لڑکی کی تصویر لگا رکھی ہوتی ہے۔ اس دھوکہ بازی سے نہ صرف عاشقوں کو چکر دیئے جاتے ہیں بلکہ یہ ان ان خوبرو لڑکیوں کے ساتھ بھی ظلم ہے کہ جن کی تصاویر کا غلط استعمال کیا جاتا ہے۔

کیا آپ کو لفظ News کے لفظی معنی معلوم ہیں؟ جو آپ سمجھتے ہیں وہ درست نہیں

اس دھوکہ بازی کو "Cat fishing" کا نام دیا جاتا ہے اور ہزاروں لاکھوں لوگ اس کا شکار ہوتے ہیں۔ ایلی فلن بھی ایک ایسی ہی لڑکی ہیں جو اس دھوکے کا 10 سال سے شکار ہیں۔ ایلی نے جریدے ”وائس“ کو دیئے گئے انٹرویو میں بتایا کہ انٹرنیٹ پر پچھلے 10 سال سے ان کی اور ان کی دوستوں کی تصاویر کا غلط استعمال کیا جا رہا ہے۔ ان کی تصاویر فیس بک پر، ٹوئٹر اور حتیٰ کہ رشتے کروانے والی ویب سائٹوں اور فحش ویب سائٹوں پر بھی استعمال کی جا رہی ہیں۔ وہ کہتی ہیں کہ کئی بار انہیں کسی نہ کسی نوجوان نے گھیر لیا اور کہتا رہا کہ میں انٹرنیٹ پر اس کی محبوبہ ہوں۔ اسے بار بار نوجوانوں کو یہ سمجھانا پڑتا ہے کہ کسی نے اس کی تصویر اپنے اکاﺅنٹ پر لگا رکھی ہے۔ ایلی کہتی ہیں کہ لڑکیوں کو اپنی تصویر انٹرنیٹ پر بھیجنے سے پہلے یہ سوچ لینا چاہئے کہ یہ کسی بھی ہاتھ میں جا سکتی ہے اور اس کا کوئی بھی غلط استعمال ہو سکتا ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...