شام کے بحران کا فوجی حل ممکن نہیں: جواد ظریف

شام کے بحران کا فوجی حل ممکن نہیں: جواد ظریف

  

تہران (آن لائن)ایران کے وزیرخارجہ محمد جواد ظریف نے کہا ہے کہ شام کا بحران بات چیت کے ذریعے حل کیا جانا چاہیے، اس کا کوئی فوجی حل ممکن نہیں ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ پہلے سے تباہ شام مزید کسی جنگ کا متحمل نہیں ہو سکتا۔ اس لیے تہران شام کے بحران کو سیاسی اور سفارتی مساعی سے حل کرنے کی ضرورت پر زور دیتا ہے۔ غیر ملکی میڈیا کے مطابق ڈاووس میں منعقدہ اکنامک فورم سے خطاب کرتے ہوئے ایرانی وزیرخارجہ کا کہنا تھا کہ شام کا بحران صرف بات چیت کے ذریعے حل کیا جا سکتا ہے۔ اس مسئلے کا کوئی فوجی حل نہیں ہے۔اس موقع پر جواد ظریف نے تہران کے میزائل پروگرام پر امریکا کی جانب سے نئی پابندیوں کو ’عجیب‘ اور حیران کن قرار دیا۔انہوں نے کہا کہ ہم اس بات پر حیران ہیں کہ امریکا نے ایران کے میزائل پروگرام پر تشویش کا اظہار کیوں کیا ہے حالانکہ ہمارا میزائل پروگرام عالمی قوانین کی خلاف ورزی نہیں ہے۔

مزید :

عالمی منظر -