پینٹا گون کو افغانستان میں داعش کے خلاف کارروائی کا اختیار مل گیا

پینٹا گون کو افغانستان میں داعش کے خلاف کارروائی کا اختیار مل گیا

  

واشنگٹن (اظہر زمان، بیورو چیف) پینٹا گون کو افغانستان میں داعش کے جنگجوؤں کا پیچھا کرکے ان کے خلاف فوجی کارروائی کرنے کا قانونی اختیار مل گیا ہے۔ پینٹا گون ذرائع کے مطابق پاکستان اور افغانستان میں سرگرم داعش کی شاخ کو جو ’’داعش خراسان‘‘ کہلاتی ہے وزارت خارجہ نے سرکاری طور پر غیر ملکی دہشت گرد تنظیم قرار دید یا ہے جس کے بعد انہیں یہ اختیار ملا ہے۔ اس عمل کا یہ بھی مطلب ہے کہ اب ہر اس فرد یا گروہ کو اس تنظیم کو مادی یا مالی امداد فراہم کرنے پر اس کے نتائج بھگتنا ہوں گے۔ امریکی فوجی جریدے ’’ملٹری ائمز‘‘ کی رپورٹ میں بتایا گیاہے کہ جنوری 2015ء میں ایک ہزار سے تین ہزار جنگجوؤں پر مشتمل اس گروہ نے داعش کے سربراہ ابوبکر البغدادی سے وفاداری کا لف اٹھا کر اپنی تنظیم کے قیام کا اعلان کیا تھا۔ ایک سابق پاکستانی طالبان حافظ سعید خان کی سربراہی میں قائم ہونے والی اس تنظیم کے زیادہ تر ارکان پاکستانی طالبان اور افغان طالبان سے منحرف ہوکر اس میں شامل ہوئے ہیں۔

مزید :

صفحہ اول -