کے پی میں بلوچستان جیسی تبدیلی کا امکان نہیں ،پی ٹی آئی

کے پی میں بلوچستان جیسی تبدیلی کا امکان نہیں ،پی ٹی آئی

  

لاہور(آن لائن) بلوچستان میں ن لیگ کے وزیر اعلیٰ کے خلاف تحریک عدم اعتماد کی مہم اور اس کی کامیابی کے بعد تحریک انصاف کے بعض سینئررہنماء یہ سوچ رہے ہیں کہ کے پی کے میں بلوچستان طرز پر تبدیلی کر کے کوئی ایسا اقدام اٹھایا جاسکتا ہے لیکن تحریک انصاف کی اعلیٰ قیادت اور عمران خان کے قریبی ساتھیوں نے اب تک اس طرح کے کسی خطرے کومحسوس کیا اور نہ ہی کوئی منصوبہ بندی کا عندیہ دیا ہے جبکہ بعض رہنماؤں میںیہ سوچ پائی جاتی ہے کہ خیبر پختوانخوامیں بلوچستان طرز کی کسی تبدیلی سے چوکنا رہنے اور نمٹنے کیلئے پیشگی منصوبہ بندی کرنے کی ضرورت ہے اس حوالے سے ذرائع کے مطابق حکومت کے اتحادی مولانا فضل الرحمن کی شہباز شریف اور آصف علی زرداری سے گزشتہ دنوں ہونے والی ملاقات کے بعد اگلے روز میڈیا میں آنے والی خبروں نے تحریک انصاف کے رہنماؤں کو تشویش میں مبتلا کر دیا تھا جس کے بارے میں انہوں نے پارٹی کے اندربھی اظہار خیال کیا تھا تاہم اس معاملے کو ابھی تک قیادت کی سطح پر زیر بحث نہیں لایاگیا جبکہ ان رہنماؤں کاکہنا ہے کہ مخالفین کی جانب سے صوبے میں اس طرح کا کوئی بھی اقدام پی ٹی آئی کی سیاسی ساکھ کیلئے انتہائی نقصان دہ ہو سکتا ہے اس لئے قیاد ت کو پیشگی منصوبہ بندی کرتے ہوئے اپنے تمام اراکین اور اتحادیوں سے روابط کا از سر نو جائزہ لینا چاہیے ۔

کے پی تبدیلی

مزید :

علاقائی -