کراچی ، مبینہ پولیس مقابلہ میں ہلاک مقصود کی میت ساہیوال پہنچ گئی، سپرد خاک

کراچی ، مبینہ پولیس مقابلہ میں ہلاک مقصود کی میت ساہیوال پہنچ گئی، سپرد خاک

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


کراچی ،ساہیوال (مانیٹرنگ ڈیسک،بیورو رپورٹ) کراچی ڈرگ روڈ میں مبینہ پولیس مقابلے کے دوران ہلاک ہونے والے مقصود کی میت ساہیوال پہنچادی گئی، گھر میں کہرام مچ گیا، اہلخانہ غم سے نڈھال ہیں، بہنوں نے انصاف نہ ملنے پر خود کو جلانے کی دھمکی دیدی۔ معذور باپ بھی انصاف کا طلب گار ہے۔ چھ بہنوں کا اکلوتا بھائی معذور باپ کے واحد سہارے مقصود جس کی جان کراچی میں فائرنگ کے واقعے میں چلی گئی میت ساہیوال پہنچی تو کہرام مچ گیا، ہر کوئی ہوش کھو بیٹھا، گھر والوں کی جیسے دنیا اجڑ گئی۔مقصود واحد کمانے والا تھا جو کراچی میں رکشہ چلا کر اپنے گھر کا چولہا جلاتا تھا، کچھ دن بعد اس کی شادی بھی تھی۔مقصود گذشتہ روز اندھی گولی کا نشانہ بنا جو ڈرگ روڈ پر پولیس مقابلے کے دوران چلی جس نے ایک گھر اجاڑ دیا۔ دریں اثنا ء شاہراہ فیصل پر مبینہ پولیس مقابلے میں نوجوان کی ہلاکت کے بعد پولیس نے ریکارڈ کرایا گیا ابتدائی بیان تبدیل کرکے دوسرا بیان تیار کرلیا۔ ابتدائی بیان میں کہا گیا تھا کہ پولیس کو دیکھتے ہی ملزمان فرار ہوکر دوسری سڑک پرآئے اور رکشہ میں بیٹھ کر پولیس پر فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں شہری مقصود جاں بحق ہوگیا۔پولیس آج اپنے پہلے بیان سے منحرف ہوگئی اور دوسرا بیان تیار کرلیا جس میں کہا گیا ہے کہ ڈاکوؤں نے رکشہ نہ روکنے پر ڈرائیور کے ساتھی پر فائرنگ کی جس کی وجہ سے وہ ہلاک ہوگیا۔ جب کہ پولیس کی فائرنگ سے 2 ملزمان زخمی ہوگئے جنہیں گرفتار کرلیا گیا۔پولیس پارٹی زخمیوں کو اسپتال لے جانے کی بجائے تھانے لے گئی، سوزوکی پک اپ میں ہلاک نوجوان مقصود اور ملزمان کو تھانے لایا گیا جب کہ اس دوران رکشہ ڈرائیور کا مسافر دوست چیخ کر بتاتا رہا لیکن پولیس نے سنی ان سنی کردی۔دریں اثنامقصود کی میت ان کے آبائی گاؤں84/5-L میں لائی گئی،اس کی 20روز بعد شادی تھی اور وہ16سال سے کراچی میں مقیم اور درزی کا کام کرتا تھا ۔ مقصو د کے معذوروالد شیر محمد کا کہنا ہے کہ مقصود میرے خاندان کی کفالت کرنے والا واحد خود کفیل تھا جسے کراچی پولیس نے بیگناہ ماراہے انہیں انصاف چاہیے۔ اس موقع پر ورثاء اور اہل علاقہ نے شدید احتجاج کیا اور سندھ کی کراچی پولیس کے خلاف سخت نعرہ بازی کی ۔مظاہرین نے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ ہمیں انصاف فراہم کیا جائے۔
پولیس مقابلہ

مزید :

صفحہ آخر -