عوض نور کیساتھ زیادتی اور بعد میں قتل کرانا انسانیت سوز واقعہ ہے:امیرمقام

عوض نور کیساتھ زیادتی اور بعد میں قتل کرانا انسانیت سوز واقعہ ہے:امیرمقام
عوض نور کیساتھ زیادتی اور بعد میں قتل کرانا انسانیت سوز واقعہ ہے:امیرمقام

  



پشاور(این این آئی)مسلم لیگ ن خیبر پختونخوا کے صدر امیر مقام نے نوشہرہ میں آٹھ سالہ بچی کیساتھ زیادتی اور بعد میں قتل کرنے کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے اور اس عمل کو وحشیانہ قرار دیتے ہوئے ان واقعات کی روک تھام کیلئے سخت قانون سازی کا مطالبہ کیا ہے۔

انہوں نےکہاکہ نوشہر ہ میں آٹھ سالہ بچی کیساتھ زیادتی اوربعدمیں قتل کراناانسانیت سوزواقعہ ہے اور ننھی پری عوض نور کیساتھ جو واقعہ پیش آیا ہے اس پر ہمارا پورا معاشرہ شرمندہ ہے اوراس دلخراش واقعے پر پوری انسانیت کانپ اٹھی ہے۔انہوں نے کہاکہ افسوس کی بات ہے کہ اس طرح کے واقعات معاشرے میں بڑھتے جارہے ہیں کیونکہ اس سے آگے سفاکیت اور وحشت کی کوئی حد نہیں تاہم ایسے واقعات پر سیاست نہیں بلکہ حکومت کو پارلیمنٹ میں مشاورت کی اشدضرورت ہے کیونکہ ان واقعات سے نہ صرف انسانیت شرما رہی ہے بلکہ ملکی ساکھ بھی بین الاقوامی برداری میں بری طرح متاثر ہورہی ہے جبکہ جیتے جاگتے معاشرے کی ضمیر پر بھی ایک خطرناک دستک ہے۔ امیر مقام نے کہاکہ وقت آگیا ہے کہ ایسے ملزموں کو سرعام پھانسی دینے کیلئے قانون سازی کی جائے کیونکہ کھل عام پھانسی کی سزا سے ہی اس طرح کےواقعات کی روک تھام ممکن ہے۔انہوں نے کہاکہ دکھ درد اور انتہائی مشکل کی اس گھڑی میں مسلم لیگ ن ننھی عوض نور کے خاندان کیساتھ کھڑی ہے اور وکلا برادری سے بھی درخواست کرتی ہے کہ عوض نور کے قاتلوں کا مقدمہ لڑنے سے انکار کر دیں۔ انہوں نے کہاکہ بچوں کیساتھ جنسی زیادتیوں اور بعد میں قتل کرنے کے واقعات ملک کے مختلف حصوں میں رونما ہورہی ہے اسلئے پوری قوم کو چاہیے کہ بچوں کی زندگیوں کی تحفظ کیلئے متحد ہو جائے اور انسان نما درندوں کیخلاف ایک ہی صف میں کھڑی ہو۔

مزید : علاقائی /خیبرپختون خواہ /پشاور