دہشتگردی کیخلاف جنگ میں پاکستان نے بھاری نقصان اٹھایا،اب کسی جنگ کا حصہ نہیں بنیں گے،وزیراعظم عمران خان

دہشتگردی کیخلاف جنگ میں پاکستان نے بھاری نقصان اٹھایا،اب کسی جنگ کا حصہ نہیں ...
دہشتگردی کیخلاف جنگ میں پاکستان نے بھاری نقصان اٹھایا،اب کسی جنگ کا حصہ نہیں بنیں گے،وزیراعظم عمران خان

  



ڈیووس(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ پاکستانی قوم نے دہشتگردی کیخلاف جنگ میں 70ہزارجانوں کی قربانی دی،افغان جنگ کے باعث ہمارے معاشرے میں کلاشنکوف اورمنشیات کا کلچرآیا،اب ہم نے فیصلہ کیا ہے کسی جنگ کا حصہ نہیں بنیں گے،سیاحت کے فروغ سے ملکی معیشت کوترقی دی جاسکتی ہے،پاکستانی سرزمین کئی قدیم تہذیبوں کا مسکن ہے،پاکستان میں ایسے کئی سیاحتی مقامات ہیں جواب تک دنیا کی نظروں سے اوجھل ہیں۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے پاکستان سٹریٹجی ڈائیلاگ فورم سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان میں دہشت گردی کے باعث ہزاروں جانوں کا نقصان ہوا،افغان جنگ کے باعث کلاشنکوف اورمنشیات کلچرپروان چڑھا،کلاشنکوف اورمنشیات کلچر نے پاکستانی معاشرے کو تباہ کردیا،اب ہم نے فیصلہ کیا ہے کسی جنگ کا حصہ نہیں بنیں گے،وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ پاکستان میں سیاحت کے بہترین مقامات موجود ہیں،پاکستان میں قیام امن کا سب سے زیادہ فائدہ سیاحت کے شعبے کو ہوا۔

وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ پاکستان میں مذہبی سیاحت کے مقامات کو کبھی فروغ نہیں ملا،سیاحت کے فروغ سے ملکی معیشت میں بہتری آئےگی،وزیراعظم نے کہا کہ امریکہ کے ساتھ مل کر افغانستان میں قیام امن کےلئے کام کررہے ہیں،انہوں نے کہا کہ پاکستان میں آدھی سے زیادہ نوجوان آبادی ہے،نوجوانوں کے روزگار کےلئے غیر ملکی سرمایہ کاری لائیں گے،وزیراعظم عمران خان کاکہناتھا کہ پاکستان نے ایران اورسعودی عرب میں کشیدگی روکنے کےلئے کرداراداکیا،ہماری کوشش ہے ایران اور سعودی عرب میں تعلقات بہتر ہوں،

انہوں نے کہا کہ 60کی دہائی میں ملکی معیشت سب سے زیادہ ترقی کررہی تھی،70کی دہائی میں اداروں کو قومیانے سے سرمایہ کاروں کا اعتماد متزلزل ہوا،حکومت میں آنے کے بعد سب سے زیادہ توجہ معیشت پردی۔

مزید : اہم خبریں /قومی /علاقائی /اسلام آباد