جنوبی کوریا میں مقیم پاکستانی شہری کا ایسا اقدام کے تمام مسلمانوں کے دل جیت لیے

جنوبی کوریا میں مقیم پاکستانی شہری کا ایسا اقدام کے تمام مسلمانوں کے دل جیت ...
جنوبی کوریا میں مقیم پاکستانی شہری کا ایسا اقدام کے تمام مسلمانوں کے دل جیت لیے

  

سیول(ڈیلی پاکستان آن لائن)جنوی کوریا میں مقیم پاکستان شہری محمد ثاقب نےدو سالہ فوجی ٹریننگ کے دوران مسلمان نوجوانوں کےلیے حلال فوڈ کی فراہمی کا بل منظور کروالیا،محمد ثاقب ڈیمو کریٹک پارٹی آف کوریا کے رکن اور فارن و نیشنل یوتھ کمیٹی کے چئیرمین ہیں۔

روزنامہ نوائے وقت کے مطابق جنوبی کوریا کے قانون کے مطابق وہاں بسنے والا ہر نوجوان جب 20 برس کا ہوتا ہے تو اسے دو برس کی فوجی تربیت لینا لازم ہے۔لیکن کوریا میں بسنے والے مسلمانوں کے لیے اس معاملے میں کافی مشکلات کا سامنا تھا کیونکہ فوجی کیمپس میں حلال فوڈ نہ ہونا ان کے لیے سب سے بڑی مشکل تھی۔ جنوبی کوریا کے قانون کے مطابق کسی بھی صورت یہ فوجی ٹریننگ چھوڑی نہیں جا سکتی۔

مشکل صورتحال میں پاکستانی شہری محمد ثاقب نے وہ کارنامہ کر دکھایا ہے جس نے سب مسلمانوں کے دل جیت لیے ہیں۔ محمد ثاقب نے جنوبی کوریا کے قانون میں مسلم سپاہیوں کےلیے خصوصی طور پر حلال فوڈ کی فراہمی کے لیے تاریخی تبدیلی کی راہ ہمورا کردی ہے۔ نیا قانون پاس ہونے کے بعد سے کوریا میں بسنے والے مسلم جنکا تعلق کسی بھی ملک سے ہو انھیں دوران ٹریننگ حلال فوڈ فراہم کیا جائے گا۔محمد ثاقب نےجنوبی کوریا میں اپنی نوکری کے ساتھ ساتھ سیاست اور رفاع عامہ کے کاموں کو اپنا مشغلہ بنایا۔محمد ثاقب نے حلال فوڈ کا بل پاس کروانے کے لیے چار مرتبہ جنوبی کورین صدر سے ملاقات کی جس کے بعد مسلمانوں کے لیے حلال فوڈ کی فراہمی کا بل پاس ہوگیا ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -