جیل میں ظلم وستم،14سال سے اسرائیلی قید میں موجود فلسطینی شہری جان کی بازی ہار گیا

جیل میں ظلم وستم،14سال سے اسرائیلی قید میں موجود فلسطینی شہری جان کی بازی ہار ...
جیل میں ظلم وستم،14سال سے اسرائیلی قید میں موجود فلسطینی شہری جان کی بازی ہار گیا

  

تل ابیب(ڈیلی پاکستان آن لائن )14 سال سے اسرائیلی جیل میں قید 45سالہ فلسطینی شہری جان کی بازی ہارگیا،فلسطینی قیدیوں سے متعلق گروپوں نے اسرائیل کو قیدی کی موت کا ذمہ دار قراردیا ہے۔

عرب خبر رساں ادارے کے مطابق فلسطینی قیدیوں کے ایک معاون گروپ کا کہنا ہےکہ اسرائیل کی جیل میں قید فلسطینی قیدی کی موت کی اب تک کوئی وجہ سامنے نہیں آئی ہے۔45 سالہ فلسطینی قیدی تل ابیب کی جیل میں قید تھا جس کی موت بدھ کے روز ہوئی جب کہ اسے منگل کے روز کورونا وائرس کی ویکسین بھی دی گئی تھی۔متوفی کو پہلے سے بھی کچھ بیماریاں لاحق تھیں لہٰذا اس کی موت کی کوئی خاص وجہ اب تک سامنے نہیں آسکی ہے تاہم قیدی کی موت کی وجوہات کا پتا چلایا جائیگا۔

فلسطینی قیدیوں سے متعلق گروپوں نے اسرائیل کو قیدی کی موت کا ذمہ دار قرار دیتے ہوئے کہا ہےکہ اسرائیلی جیل میں قید تمام فلسطینیوں کی زندگی اور صحت کی ذمہ داری اسرائیل کی ہے۔اسرائیلی جیل میں جاں بحق ہونے والا فلسطینی قیدی 2006 سے قید میں تھا اور اپنی 25 سالہ قید کاٹ رہا تھا۔

مزید :

بین الاقوامی -