دنیاوی سختیوں اور آزمائشوں سے چھٹکارے کیلئے عمرہ اور حج کی بحالی ضروری: نصیر مغل 

دنیاوی سختیوں اور آزمائشوں سے چھٹکارے کیلئے عمرہ اور حج کی بحالی ضروری: نصیر ...

  

  

لاہور (انٹرویو:میاں اشفاق انجم) حج2022ء کی پالیسی دی جائے، دنیاوی سختیوں اور آزمائشوں سے چھٹکارے کیلئے عمرہ اور حج کی بحالی ضروری ہے، دوسال سے عمرہ اور حج بند ہونے سے ٹریڈ دیوالیہ ہو رہی ہے۔ عمرہ اور حج ایکٹ کیلئے سٹیک ہولڈر کواعتماد میں لیا جائے۔ ٹریول، عمرہ اور حج ٹریڈ کو دو سال کیلئے ٹیکس فری کیا جائے۔حج آرگنائزر کو بغیر شرا ئط اور فیس کے زیارات کے رجسٹرڈ کیا جائے۔ حج2022ء کا اپریشن پرائیویٹ سیکٹر کو دیا جائے۔ ان خیالات کا اظہار ہوپ اسلام آباد زون کے چیئرمین نصیر مغل نے روزنامہ ”پاکستان“ سے خصوصی انٹرویو میں کیا۔انہوں نے کہا کورونا سمیت تمام بیماریوں اور آزمائشوں سے نجات کا واحد ذریعہ حرمین شریفین میں سربسجود ہونے میں ہے۔ ویکسین کروانے والوں کیلئے عمرہ فیس کروٹین کی لازمی شرط زیادتی ہے، سعودی ایس او پیز کے مطابق عمرہ پہلے ہی مہنگا ہے، ٹکٹ کیساتھ پیکیج لینے سے ایک لاکھ مزید مہنگا ہو گیا ہے۔ عمرہ و حج ایکٹ کی منظوری خوش آئند ہے، ہوپ کو آن بورڈ لیا جائے، زیارت کے لئے دیوالیہ کا شکار حج آرگنائز سے30 ہزار کی شرط واپس لیں۔نصیر مغل نے کہا دو سال سے ٹریول ٹریڈ کیلئے حکو متی ریلیف پیکیج کی خبریں سن رہے ہیں عملاً کچھ نہیں کیا گیا ریلیف دینے کی بجائے ٹورازم لائسنس فیس میں اضافہ کر دیا گیا ہے۔ پنجاب حکومت سالانہ فیسوں میں اضافہ واپس لیں، دو سال کیلئے ٹیکس فری کریں۔ چیئرمین ہوپ اسلام آباد نے حج 2022ء میں اہلِ پاکستان کو شامل کرانے کیلئے وزیراعظم کردار ادا کریں ٹرید بچانے کیلئے2022ء کا اپریشن پرائیویٹ سکیم کے ذمہ لگایا جائے۔

نصیر مغل

مزید :

صفحہ آخر -